بند کریں
ادب مضموننابینا شخص

مزید مضمون

- مزید مضامین

مزید عنوان

نابینا شخص
ایک راجا جسے کہ پاس بہت عمدہ قسم کے ہیرے تھے ایک دن اسنے اُن ہیروں میں کچھ بہت عمدہ نقلی ہیرے ملادیے اور کہا جو اس میں سے اصلی اور نقلی ہیرے الگ کردے گا تو اصلی ہیرے بھی اسکو انعام میں دے دو گا ۔ بڑے بڑے جوہری ناکام ہوگے وہ اصل اور نقلی کو الگ نہ کرسکے اور ہار مان لی اتنے میں ایک نابینا شخص
 ایک راجا جسے کہ پاس بہت عمدہ قسم کے ہیرے تھے ایک دن اسنے اُن ہیروں میں کچھ بہت عمدہ نقلی ہیرے ملادیے اور کہا جو اس میں سے اصلی اور نقلی ہیرے الگ کردے گا تو اصلی ہیرے بھی اسکو انعام میں دے دو گا ۔ بڑے بڑے جوہری ناکام ہوگے وہ اصل اور نقلی کو الگ نہ کرسکے اور ہار مان لی اتنے میں ایک نابینا شخص آیااور اسنے دعو یٰ کیا میں یہ کام کرسکتا ہوں لوگ ہنسے لگے تم اندھے ہو اور یہ کر لو گے یہاں ایک سے ایک ماہر یہ کام نہیں کر سکا راجا نے اسکو اجازت دے دی اور اسنے کہا وہ ان ہیروں کو کچھ دیرکے لیے اپنے ساتھ لے جانا چاہتا ہے ۔ اجازت مل گئی کچھ دیر بعد وہ واپس آیا اور اسنے اصلی اور نقلی ہیرے الگ کردے بادشاہ اور درباری بہت حیران ہوئے پوچھا یہ تم نے کیسے کیا اسنے کہا بہت آسانی سے میں نے ان ہیروں کو دھوپ میں رکھا جو نقلی تھے وہ دھوپ کی شدت برداشت نہ کر سکے وہ گرم ہوگے اور جو اصل تھے ان کو کچھ نہ ہوا ۔ اورراجا نے اس کی عقلمندی سے خوش ہو کر وہ سب ہیرے نابینا شخص کو دے دیں ۔ علم اللہ کا دیا ہوا انمول تحفہ ہے وہ جسے چاہیں عطا کر سکتا ہے ۔ کبھی بھی کسی کو اپنے سے حقیر نہیں سمجھنا چاہیے۔

(0) ووٹ وصول ہوئے