ترک صدر نے ڈالر کی اجارہ داری ختم کرنے کیلئے زبردست اور متبادل حل پیش کردیا

منگل اپریل 12:29

ترک صدر نے ڈالر کی اجارہ داری ختم کرنے کیلئے زبردست اور متبادل حل پیش ..
استنبول ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 اپریل2018ء) ترکی کے صدر رجب طیب اردوان نے منی ایکسچینج کے دبائو میں آئے ہوئے ممالک سے اپیل کی ہے کہ وہ ڈالر کی جگہ سونے کی صورت میں قرضہ لیں۔استنبول میں گلوبل انٹرپرائزنگ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے صدر اردوان نے کہا ہے کہ سیاست اور تجارت کے مراکز میں تبدیلی آنا شروع ہو گئی ہے۔یہ شعور بیدار ہونا شروع ہو گیا ہے کہ دنیا کو کسی واحد مرکز سے نہیں چلایا جا سکے گا۔

(جاری ہے)

عالمی مالیاتی فنڈ آئی ایم ایف کے اپنے مقروض ممالک کی سیاست کو بھی کنٹرول میں لینے کی کوشش میں ہونے کی طرف اشارہ کرتے ہوئے انھوں نے کہا ہے کہ "یہ دنیا کے غریب ممالک کو سسکاسسکا کر مار رہی ہے‘‘۔ ترکی کے 2013 میں آئی ایم ایف کے قرضے سے نجات پانے کا ذکر کرتے ہوئے صدر ایردوان نے کہا کہ ڈالر کے ساتھ دنیا منی ایکسچینج کے دباو میں آ جاتی ہے لیکن سونا تاریخ میں کبھی بھی دباو ڈالنے والا عنصر نہیں بنا۔انہوں نے ممالک سے ڈالر کے ذریعے قرضہ لینے کی بجائے سونے کی صورت میں قرضہ لینے کی اپیل کی۔

متعلقہ عنوان :