لاہور ہائی کورٹ نے ٹیکس چوری میں ملوث شخصیات کیخلاف کارروائی کیلئے درخواست وفاقی سیکرٹری خزانہ کو بھجوادی

بدھ اپریل 16:30

لاہور۔18 اپریل(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 اپریل2018ء) لاہور ہائی کورٹ نے اربوں روپے کی ٹیکس چوری میں ملوث بااثر شخصیات کیخلاف کارروائی کے لیے درخواست وفاقی سیکرٹری خزانہ کو بھجوادی، عدالت نے متعلقہ سیکرٹری کودرخواست پر فیصلہ کرنے کی ہدا یت کر دی،لاہور ہائیکورٹ کی جسٹس عائشہ اے ملک نے بدھ کوکیس کی سماعت کی، دوران سماعت درخواست گزار مقامی شہری اے کے بٹ نے موقف اختیار کیا کہ ٹیکس چوری کرنا قومی جرم اور ملکی قوانین کی سنگین خلاف ورزی ہے، قیام پاکستان سے آج تک بااثر شخصیات نے ٹیکس قوانین کی خلاف ورزی کی اور اربوں کا ٹیکس چوری کر کے قومی خزانے کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا،انہوں نے کہا کہ بااثر شخصیات نے ٹیکس چوری کیلئے حکومتوں میں اپنے اثرورسوخ کو استعمال کیا، ٹیکس چوروں کے اس اقدام سے حکومتوں کو قرضے لینے پڑے اور ملک کودیوالیہ بنایا گیا، انہوں نے استدعا کی کہ عدالت ان ٹیکس چوروں کیخلاف کارروائی کا حکم دے، مزید استدعا کی کہ ٹیکس چوروںکیخلاف موثر قانون سازی کا حکم دیا جائے،جس پر عدالت نے درخواست دادرسی کیلئے سیکرٹری فنانس ڈویژن کو بھجوا دی،عدالت نے درخواستگزار کو سن کر قانون کے مطابق فیصلہ کرنے کی ہدایت کر دی۔

متعلقہ عنوان :