پشاور کے رہائشی کا انصاف کی فراہمی کی اپیل

جمعرات اپریل 18:32

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 اپریل2018ء) پشاور پو لیس لا ئن کے رہا ئشی لا ئق زما ن نے چیف جسٹس اف پاکستان ،،وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا اور آئی جی پو لیس سے اپیل کی ہے کہ اٴْن کی بیٹی پر تشدد کر نے والی سکول ٹیچر کو فی الفور معطل کر کے انصا ف فرا ہم کیا جا ئے گزشتہ روز پشاور پریس کلب میں صھا فیوں سے با ت کر تے ہو ئے اٴْنہوں نے کہا کہ میری بیٹی لا ئبہ جو گو رنمنٹ پرا ئمری سکول لکی مروت شا ہ اندر شہر میں تیسری جما عت طا لب علمہ ہے جس کا ہا تھ پہلے سے ٹھوٹا ہو اتھا اس کے با وجود ہم نے اٴْسے سکول بھیجا مگر 1ما رچ کو مس شا ہین اور مس رخسا نہ نے بلا کس ی وجہ کے میری بیٹی کا ہا تھ دوبا رہ تھوڑ دیا جو کہ سرا سر نا انصا فی ہے جبکہ اس کے خلا ف ہم نے کا بلی تھا نہ میں ایف ائی ار کرانے گئے تو مزکورہ تھا نہ کے ایس ایچ او نے اٴْلٹاہمیں ہی ڈرا نا دھمکا نا شروع کر دیا اس حو الہ سے ہم نے وزیر اعلیٰ کمپلینٹ سیل میں بھی درخوا ست جمع کرا ئی ہے مگر تا حا ل کو ئی شنوا ئی نہیں ہو سکی ہے اٴْنہوں نے کہا کہ پاکستان تحریک انصا ف کے چیئر مین جو اپنے جلسے جلو سوں میں تبدیلی کے بلند وبا نگ دعوے کر تے ہے اٴْن میں کو ئی صدا قت نہیں اٴْنہوں نے ایجو کیشن ڈیپا رٹمنٹ کے اعلیٰ افسران سے اپیل کی ہے کہ مزکو رہ اسا تذہ کے خلا ف کا روا ئی کی جا ئے اور میری بیٹی کا سا ل ضا ئع ہو نے سے بچا یا جا ئے۔