پاکستان پرونشل سروسز اکیڈمی پشاور میں زیر تربیت افسران کی جانب سے قوت سماعت سے محروم 35 بچوں میں سماعت کے آلات تقسیم کئے گئے

جمعرات دسمبر 21:51

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 13 دسمبر2018ء) پاکستان پرونشل سروسز اکیڈمی پشاور میں چاروں صوبوں اور گلگت بلتستان سے تعلق رکھنے والے زیر تربیت افسران کی جانب سے قوت سماعت سے محروم 35 بچوں میں سماعت کے آلات تقسیم کئے گئے۔تقریب کے مہمان خصوصی سابق چیف سیکرٹری خیبر پختونخواہ عبداللہ تھے۔اس موقع پر ڈائریکٹر جنرل پراونشل سروسز اکیڈمی پشاور نگہت مہروز،اساتذہ، قوت سماعت سے محروم بچوں کے والدین اور مختلف صوبوں کے زیر تربیت 78 ویں کورس کے افسران بھی موجود تھے۔

(جاری ہے)

مہمان خصوصی عبداللہ نے کہا کہ قوت سماعت سے محروم ان بچوں میں آلات سماعت تقسیم کرنا ایک ہمدرد، دوستانہ اور بہترین معاشرے کی عکاسی کرتا ہے، تمام طبقہ فکر سے تعلق رکھنے والیاور مخیر حضرات آگے آکر ان جیسے بچوں کی داد رسی اور مدد کریں۔انہوں نے کہا کہ یہ بچے وطن عزیز کی ترقی میں نمایاں کردار ادا کرسکتے ہیں۔ڈائریکٹر جنرل نگہت مہروز نے کہا کہ 35 خصوصی بچوں کو آلہ سماعت سی ایس ایس، پی ایم ایس اورایکسائزاینڈٹیکسیشن کے زیر تربیت افسران کی مالی تعاون سے فراہم کی گئی ہیں۔انہوں نے کہا کہ اس جیسی ہمدردانہ سرگرمیوں سے نہ صرف مستحق اور معذوروں کی داد رسی ہو گی بلکہ آنے والی نسل میں بھی خدمت،ہمدردی اور محبت کا جذبہ پیدا ہوگا۔

متعلقہ عنوان :