Live Updates

نواز شریف کے بارے میں میڈیکل بورڈ کے فیصلے پر عمل درآمد ہو گا، سینیٹر فیصل جاوید

عمران خان کرپشن اور منی لانڈرنگ کا خاتمہ کرنے آئے ہیں سو کر کے رہیں گے، بھارت کرتارپور راہداری منصوبہ کو ہائی جیک کرنے کی کوشش کررہا ہے، انٹرویو

جمعہ نومبر 14:22

نواز شریف کے بارے میں میڈیکل بورڈ کے فیصلے پر عمل درآمد ہو گا، سینیٹر ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 08 نومبر2019ء) پاکستان تحریک انصاف کے رہنما سینیٹر فیصل جاوید خان نے کہا ہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف کی صحت ٹھیک نہیں ہے لہٰذا میڈیکل بورڈ ان کیلئے جو بھی فیصلہ کرے گا اس پر عمل درآمد کیا جائیگا،عمران خان کرپشن اور منی لانڈرنگ کا خاتمہ کرنے آئے ہیں سو کر کے رہیں گے، بھارت کرتارپور راہداری منصوبہ کو ہائی جیک کرنے کی کوشش کررہا ہے۔

ایک انٹرویومیں انہوںنے کہاکہ عدالت نے مریم نواز کو بھی انسانی بنیادوں پر رہا کیا ہے، عدالتیں جو بھی فیصلہ کرتی ہیں حکومت مانتی ہے، سابق وزیراعظم کے معاملے میں بھی اس روایت کو برقرار رکھا جائے گا۔سینیٹر فیصل جاوید خان نے کہا کہ یہ تاثر غلط ہے کہ اپوزیشن اور حکومت کے درمیان کوئی ڈیل ہوئی ہے، عمران خان کرپشن اور منی لانڈرنگ کا خاتمہ کرنے آئے ہیں سو کر کے رہیں گے۔

(جاری ہے)

آزادی مارچ سے متعلق سوال پر انہوںنے کہاکہ مولانا فضل الرحمان کے ساتھ مذاکرات چل رہے ہیں، انہوں نے جو رجسٹر کرانا تھا کرا لیا ہے اب انہیں قت ضائع کیے بغیر واپس چلے جانے چاہیے۔مولانا کی جانب سے دھاندلی کے الزامات کے بارے میں انہوں نے کہا کہ عمران خان وہ واحد لیڈر ہیں جو پانچوں حلقوں سے جیت کر آئے ہیں اور مولانا ناصرف ہارے ہیں بلکہ اپنے حلقے کے نتائج چیلنج کرنے کی بھی ہمت نہیں کر سکے۔

سینیٹر فیصل جاوید نے واشگاف الفاظ میں کہا کہ مولانا کو این آر او ملے گا نہ ہی استعفیٰ۔گزشتہ روز سینیٹ کے اجلاس میں پیپلزپارٹی کے رہنما مولا بخش چانڈیو سے ہونے والی جھڑپ کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ انہوں نے مجھے کہا کہ بے بی بیٹھ جائیں جواباً میرے یہ کہنے پر کہ بے بی تو بلاول ہے وہ ہتھے سے اکھڑ گئے اور غیر پارلیمانی الفاظ کا استعمال کیا۔

فیصل جاوید نے کہا کہ مجھے امید نہیں تھی کہ مولا بخش چانڈیو جیسے سینئر سیاست دان اتنی چھوٹی سی بات پر اتنا زیادہ ردعمل دیں گے، سیاست دان اکثر سوچتے ہیں ایسا کیا کیا جائے جس سے میڈیا میں اچھی کوریج آجائے شاید انہوں نے بھی ایسا اسی لیے کیا۔کرتارپور راہداری منصوبے کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ بابا گرونانک کی 550ویں سالگرہ کے موقع پر اس منصوبے کا افتتاح ہونا بہت خوش آئند ہے، یہ پوری دنیا کے سکھوں کے لیے بہت خوشی کی گھڑی ہے۔

سینیٹر فیصل جاوید نے کہا کہ اس منصوبے کی وجہ سے پوری دنیا کی سکھ کمیونٹی عمران خان اور جنرل باجوہ کو دعائیں دے رہی ہے۔انہوں نے بتایا کہ کرتارپور راہداری کی افتتاحی تقریب میں سکھوں کے اسکالر، نوجوت سنگھ سدھو اور اداکار سنی دیول بھی آئیں گے۔پی ٹی آئی کے رہنما نے انکشاف کیا کہ بھارت کرتارپور راہداری منصوبہ کو ہائی جیک کرنے کی کوشش کررہا ہے، بھارت میں سکھوں کو تنگ کیاجارہا ہے، انہیں پاسپورٹ ایشو نہیں کیے جا رہے اور کہا جا رہا ہے کہ کرتاپور جانے کے بعد دیگر ممالک کا ویزا نہیں ملے گا۔
مولانا فضل الرحمان کا دھرنا ختم سے متعلق تازہ ترین معلومات