ٹیکسٹائل کی صنعت میں چند مصنوعات پر اضافی کسٹمز ڈیوٹی اور ریگولیٹری ڈیوٹی کو ہٹانے کی منظوری دیدی گئی ہے

وزیراعظم کے مشیر برائے تجارت عبدالرزاق داؤد کا ٹویٹ

بدھ ستمبر 17:39

ٹیکسٹائل کی صنعت میں چند مصنوعات پر اضافی کسٹمز ڈیوٹی اور ریگولیٹری ..
اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 23 ستمبر2020ء) وزیراعظم کے مشیر برائے تجارت عبدالرزاق داؤد نے کہا ہے کہ اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں ٹیکسٹائل کی صنعت میں چند مصنوعات پر اضافی کسٹمز ڈیوٹی اور ریگولیٹری ڈیوٹی کو ہٹانے کی منظوری دیدی گئی ہے، یہ منظوری ہماری خام مال وغیرہ پر ڈیوٹی میں کمی کے ذریعے لاگت کو کم کرنے کی پالیسی کے تحت کی گئی۔

(جاری ہے)

بدھ کو اپنے ایک ٹویٹ میں انہوں نے کہا کہ خام مال وغیرہ پر ڈیوٹی میں کمی میک ان پاکستان کے تحت صنعت کاری کو فروغ دینے اور برآمدات کی بنیاد پر ترقی یقینی بنانے کا ایک لازمی حصہ ہے، باضابطہ نوٹیفیکیشن وفاقی کابینہ کی توثیق کے بعد جاری کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ اس فیصلے سے ہمارے برآمد کنندگان اپنی مصنوعات کو وسیع کرنے کے قابل ہوں گے اور ہماری عالمی مسابقت بہتر ہو گی، وزارت تجارت اب دوسرے شعبوں کیلئے اسی پالیسی کے تحت اصلاحات کرے گی جس میں چمڑے، انجینئرنگ، کیمیکلز فارما اور فوڈ کی صنعتیں شامل ہیں۔

متعلقہ عنوان :