حافظ آباد میں سہیلی پر قاتلانہ حملہ کرنے والی لڑکی کی دیدہ دلیری، دھمکانے کے لیے اسپتال جا پہنچی

پہلے حملے میں تو بچ گئی ہو لیکن دوبارہ شادی کا سوچا تو قتل کر دوں گی۔ ملزمہ کی زخمی لڑکی کو دھمکی

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان منگل فروری 14:29

حافظ آباد میں سہیلی پر قاتلانہ حملہ کرنے والی لڑکی کی دیدہ دلیری، دھمکانے ..
حافظ آباد (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 23 فروری 2021ء) :حافظ آباد میں سہیلی پر قاتلانہ حملہ کرنے والی لڑکی کی دیدہ دلیری، دھمکانے کے لیے اسپتال جا پہنچی ۔تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز پنجاب کے ضلع حافظ آباد میں ایک لڑکی نے اپنی سہیلی پر حملہ کروا دیا جس سے وہ شدید زخمی ہو گئی ۔بتایا گیا کہ حافظ آباد کے نواحی قصبے جلال بھٹیاں میں ساتھ جینے مرنے کی قسمیں کھانے والی سہیلی کی دشمن بن گئی۔

ملزمہ نے سہیلی کو مارنے کے لیے کرائے کے قاتلوں کو اس کے گھر بھیج دیا۔ پولیس نے واقعے میں ملوث ندیم کو گرفتار کیا جس کو زخمی لڑکی اور گھر والوں نے شناخت پریڈ کے دوران شناخت کر لیا۔ملزم ندیم نے اعتراف جرم بھی کر لیا ہے۔اور اب بتایا گیا ہے کہ حافظ آباد میں سہیلی پر قاتلانہ حملہ کرنے والی لڑکی دیدہ دلیری سامنے آ گئی، ایک بار پھر دوست کو سنگین دھمکی دے دی۔

(جاری ہے)

بتایا گیا ہے کہ ملزمہ سہیلی کو دھمکانے کے لیے اسپتال جا پہنچی اور وہاں پر بھی سہیلی کو ڈرانا دھمکانا شروع کر دیا۔ملزمہ نے اپنی دوست کو دھمکی دی کہ پہلے حملے میں تو بچ گئی ہو لیکن دوبارہ شادی کا سوچا تو قتل کر دوں گی۔
۔واضح رہے ملزمہ دوست کو جان سے نہیں مروانا چاہتی تاہم کوئی سبق سکھانا چاہتی ہے۔ ذرائع کے مطابق دونوں لڑکیوں نے کبھی شادی نہ کرنے کی قسم کھائی تھی لیکن ایک لڑکی کی منگنی طے ہو گئی، گھر والوں نے منگنی طے کی تو دوسری لڑکی سے برادشت نہ ہوا اور غصے میں آکر انتہائی قدم اٹھا لیا۔

لڑکی نے گھر سے زیور چرا کر ٹارگٹ کلر کو دے کر دوست پر حملہ کروا دیا۔ ملزمہ نے اپنی دوست کو مارنے کے لیے ٹارگٹ کلر کو گھر سے جیولری چرا کر دی۔ لڑکی کو سہیلی پر اس بات کا غصہ تھا کہ زندگی بھر شادی نہ کرنے کی قسم کیوں توڑی۔قاتلانہ حملے میں لڑکی شدید زخمی ہو گئی۔مذکورہ لڑکی اسپتال میں اس وقت زندگی اور موت کی جنگ لڑ رہی ہے۔