Live Updates

پی ٹی آئی کا واضح مئوقف کہ رہنماؤں کی رہائی تک مذاکرات نہیں ہوں گے

اگر رہائی نہیں ہوئی تو پھر ہم دمادم مست قلندر کریں گے، تحریک بھی چلائیں گے اور حکومت کے پیچھے بھی رہیں گے پھر دیکھنا الیکشن بھی جلد ہی آکر رہے گا۔اپوزیشن لیڈر عمر ایوب خان کی گفتگو

Sanaullah Nagra ثنااللہ ناگرہ جمعرات 13 جون 2024 22:48

پی ٹی آئی کا واضح مئوقف کہ رہنماؤں کی رہائی تک مذاکرات نہیں ہوں گے
اسلام آباد ( اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین۔13 جون 2024ء) قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر عمر ایوب خان نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی کا واضح مئوقف کہ رہنماؤں کی رہائی تک مذاکرات نہیں ہوں گے، اگر رہائی نہیں ہوئی تو پھر ہم دمادم مست قلندر کریں گے، تحریک بھی چلائیں گے اور حکومت کے پیچھے بھی رہیں گے پھر دیکھنا الیکشن بھی جلد ہی آکر رہے گا۔ انہوں نے اے آروائی نیوز کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان سے آج ملاقات ہوئی ان کی سپرٹ ہائی تھی، یہ کرپٹ اور فاشسٹ حکومت ہے ، انہوں نے عمران خان کے سیل کی تصویر دکھائی، یہ عقل کے اندھے ہیں، وزیراعظم عمران خان کو ڈیتھ سیل میں رکھا ہوا ہے، جب نوازشریف جیل میں تھا ان کو تمام لوگوں کو ملنے کی سہولت تھی ، جیل میں کھانے جاتے تھے ،موجودہ آئی جی پنجاب اور آئی جی جیل خانہ جات ٹاؤٹ ہیں، عمران خان کی وکلاء اور فیملی کے ساتھ صرف بیس منٹ ملاقات ہوتی ہے۔

(جاری ہے)

ہمارے زمانے میں نیب نے 11سو ارب کی کلیکشن کرنی تھی، ان کا یہی مقصد تھا کہ نیب کا ٹارگٹ ختم کردیں۔
عمر ایوب نے کہا کہ ہم تحریک تحفظ آئین پاکستان الائنس کا حصہ ہیں، محمود اچکزئی مذاکرات جس کے ساتھ مرضی کریں، پی ٹی آئی کا واضح مئوقف ہے کہ رہنماؤں کی رہائی اور کیسز ختم ہونے تک مذاکرات نہیں ہوں گے۔ اگر ایسا نہیں ہوگا تو پھر ہم دمادم مست قلندر کریں گے، ہم تحریک بھی چلائیں گے، حکومت کے پیچھے رہیں گے پھر آپ دیکھ لینا کہ الیکشن بھی جلد ہی آکر رہے گا۔

عمرایوب نے کہا کہ شہبازشریف بھلے ہی مولانا فضل الرحمان سے ملیں، لیکن پی ٹی آئی کا مولانا کے ساتھ ایک الگ ٹریک ہے ، ہماری منزلیں ایک ہیں، پاکستان میں آئین قانون کی بالادستی ہونی چاہئے، ہماری تحریک رکی نہیں ہے، یہ کہتے ملک میں دہشتگردی کا خطرہ ہے، پھر کون یہاں سرمایہ کاری کرے گا؟
Live پی ٹی آئی پر پابندی سے متعلق تازہ ترین معلومات