پاک فضائیہ کی ٹیم نے انٹر سروسز گالف چیمپئن شپ 2021 جیت لی

سروسز گالف چیمپئن شپ2021 پاک آرمی، نیوی اور فضائیہ کی ٹیموں کے مابین 15 سے 19 ستمبر 2021 تک کھیلی گئی یہ ٹورنامنٹ اس بات کی غمازی کرتا ہے کہ گالف ایک ایسا کھیل ہے جو کہ تینوں مسلح افواج کے کھلاڑیوں کو قریب لا کر صحتمند کھیل کی سرگرمیوں کو فروغ دینے کا باعث ہی: ایئر وائس مارشل ظفر اسلم

پیر 20 ستمبر 2021 22:08

پاک فضائیہ کی ٹیم نے انٹر سروسز گالف چیمپئن شپ 2021 جیت لی
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 20 ستمبر2021ء) پاک فضائیہ کی ٹیم نے انٹر سروسز گالف چیمپئن شپ 2021 جیت لی ۔ انٹر سروسز گالف چیمپئن شپ 2021 پاکستان ائیر فورس سکائی ویو گالف اینڈ کنٹری کلب، لاہور میں منعقد ہوئی۔ سروسز گالف چیمپئن شپ2021 پاک آرمی، نیوی اور فضائیہ کی ٹیموں کے مابین 15 سے 19 ستمبر 2021 تک کھیلی گئی۔ پاک فضائیہ کے ترجمان کے مطابق ائیر وائس مارشل ظفر اسلم، ائیر آفیسر کمانڈنگ سنٹرل ائیر کمانڈ، چیمپئن شپ کی تقریب تقسیم انعامات کے مہمانِ خصوصی تھے۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے انہوں نے، کووڈ -19کی وبا کے حالات کے باوجود اس ایونٹ کو کامیاب بنانے پر تمام شرکا کا شکریہ اد ا کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ ٹورنامنٹ اس بات کی غمازی کرتا ہے کہ گالف ایک ایسا کھیل ہے جو کہ تینوں مسلح افواج کے کھلاڑیوں کو قریب لا کر صحتمند کھیل کی سرگرمیوں کو فروغ دینے کا باعث ہے۔

(جاری ہے)

مہمانِ خصوصی نے جیتنے والوں کھلاڑیوں میں ٹرافی اور انعامات تقسیم کئے۔

انٹر سروسز گالف چیمپئن شپ کی پروفیشنل ٹرافی پاک فضائیہ نے جیتی جو کہ ائیر وائس مارشل اکرام نور نے حاصل کی جبکہ پاک آرمی نے گالف کی ایمیچور ٹرافی حاصل کی۔ گیسٹ کیٹگری میں ریئر ایڈمرل طارق علی، بریگیڈیئر طاہر اور ریئر ایڈمرل عبدالباسط بٹ نے بالترتیب پہلا، دوسرا اور تیسرا نیٹ انعام حاصل کیا جبکہ پہلے، دوسرے اور تیسرے گراس انعام کے حقدار ائیر کموڈور طارق عثمان عباس، کموڈور ساجد حسین اور ائیر کموڈور عمران مدد ترمذی قرار پائے۔

سب سے طویل شاٹ کا انعام کموڈور وجیہ الحسن نے حاصل کیا جبکہ پن کے نزدیک ترین شاٹ کا انعام ایئر وائس مارشل ظفر اسلم نے حاصل کیا۔اس موقع پر رئیر ایڈمرل عبدالباسط بٹ، پریذیڈنٹ سروسز سپورٹس کنٹرول بورڈ جوائنٹ سٹاف ہیڈکوارٹرز، نے ائیر وائس مارشل ظفر اسلم کو یادگاری شیلڈ پیش کی۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments