لاڑکانہ‘پولیس تشدد سے ہلاک ہونے والے نوجوان کاشف شاہ کے مقدمے میں نامزد سابق ایس ایچ او کو مارکیٹ پولیس نے گرفتار کرلیا

جمعرات اپریل 14:08

لاڑکانہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 اپریل2018ء) باقرانی تحصیل کے تھانہ شہید الاہی بخش سیال میں تین روز قبل پولیس تشدد سے ہلاک ہونے والے نوجوان کاشف شاہ کے مقدمے میں نامزد سابق ایس ایچ او اقبال کاندڑو کو مارکیٹ پولیس کے حد سے گرفتار کرکے تھانہ سول لائین پر منتقل کرکے لاکپ کیا گیا۔ گرفتاری کے بعد گرفتار ایس ایچ او کو پولیس سکیورٹی میں تھانے منتقل کیا گیا۔

پولیس کے مطابق گرفتار ایس ایچ او کو گرفتار کرنے کے بعد لاکپ کردیا ہے۔

(جاری ہے)

دوسری جانب رابطہ کرنے پر ایس ایس پی لاڑکانہ تنویر حسین تنیو نے بتایا کہ مقدمے میں نامزد تھانہ شہید الاہی بخش سیال کے سابق ایس ایچ او اقبال کاندڑو کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔ کسی کے ساتھ کوئی ناانصافی نہیں کریں گے، واقعے کی شفاف تحقیقات کرکے نوجوان کاشف شاہ کے ورثا کو انصاف فراہم کیا جائے گا۔ واضع رہے کہ تین روز قبل تھانہ شہید الاہی بخش سیال پولیس کی جانب سے کاشف شاہ کو 80 ہزار چوری کے الزام میں گرفتار کیا گیا تاہم پولیس نے کاشف کی موت کو خود کشی قرار دیا تھا جبکہ ورثا نے پولیس پر تشدد کرکے نوجوان کو ہلاک کرنے پر سخت احتجاج کیا تھا۔