پنجاب یونیورسٹی میں جاری ہم نصابی سرگرمیوں کا تیسرا روز

سندھی ، بلوچی، پٹھان اور پنجابی طلبہ نے ملی نغموں کے ذریعے ملک سے لازوال محبت کا ثبوت پیش کیا

بدھ اپریل 18:04

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 اپریل2018ء) پنجاب یونیورسٹی پنجاب ہائر ایجوکیشن کمیشن ، نیب اور دی ایجوکیشنسٹ کے اشتراک جاری پانچ روزہ کل پاکستان ہم نصابی سرگرمیوں کے تیسرے روز چار مقابلہ جات کا مختلف ہالز میں انعقاد کیا گیاجن میں پاکستان کے مختلف سکولز ، کالجز اور یونیورسٹیز کے طلبائو طالبات نے حصہ لیا۔ تیسرے روز جاری مقابلوں میں ڈائریکٹر نیب اسسٹنٹ ساجد ، نامور کارٹونسٹ شوکت محمود ، انچارج ادارہ علوم ابلاغیات ڈاکٹر نوشینہ سلیم، ایڈیٹر دی ایجوکیشنسٹ شبیر سرور،فیکلٹی ممبران اورطلبائو طالبات نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔

اس موقع پر ’پاکستان میں کرپشن ‘کے موضوع پر پنجابی ، اردو اور انگریزی تقریری مقابلوں میں 200سے زائد طلباء طالبات نے حصہ لیااور اپنی تقاریر سے معاشرے میںپھیلی کرپشن کے ناسور کے مختلف پہلوئوںپر روشنی ڈالی۔

(جاری ہے)

ادارہ تعلیم و تحقیق کی راہداری میں منعقد ہونے والے کارٹون نگاری مقابلوںشریک 17طلبہ میں سکول کی سطح پر شاہد جباراور یونیورسٹی کی سطح پر نبیل الرحمان نے پہلی پوزیشنز حاصل کیں۔

اسی طرح ادارہ تعلیم و تحقیق کے وحید شہید حال میں منعقدہ ملی نغموں کے دوسرے مرحلے میں بلوچی ، سندھی ، پختون اور پنجابی طلبہ نے حصہ لیا اور اپنے گیتوں کے ذریعے پاکستان سے لازوال محبت کا اظہار کیا۔ ان مقابلوں میں بلوچی طلبہ محمد اظہر نے بہترین ملی نغمے پر حاضرین سے خوب داد وصول کی۔ ملی نغموں میں مختلف سکولوں ، کالجوں اور یونیورسٹیوں کے 31طلبائو طالبات نے شرکت کی جن میں سکول کی سطح پر فاتح شاہ اور یونیورسٹی کی سطح پر سامعیہ مزاج نے پہلی پوزیشنز اپنے نام کیں۔ پانچ روزہ کل پاکستان ہم نصابی سرگرمیوں کے چوتھے روز (آج)طلبہ کے مابین تقریری اور شاعری کے مقابلے منعقد ہوں گے ۔