سپریم کورٹ نے خواجہ آصف کی نااہلی کےخلاف اپیل کی سماعت کے لیے تین رکنی بینچ تشکیل دے دیا

Mian Nadeem میاں محمد ندیم جمعہ مئی 15:59

سپریم کورٹ نے خواجہ آصف کی نااہلی کےخلاف اپیل کی سماعت کے لیے تین رکنی ..
اسلام آباد(اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین-انٹرنیشنل پریس ایجنسی۔04 مئی۔2018ء) سپریم کورٹ نے سابق وزیر خارجہ خواجہ آصف کی نااہلی کےخلاف اپیل پر سماعت کے لیے تین رکنی خصوصی بینچ تشکیل دے دیا ہے۔سابق وفاقی وزیرخواجہ آصف نے دائر درخواست میں عدالت سے استدعا کی کہ اسلام آباد ہائیکورٹ کا 26 اپریل کو سنایا گیا فیصلہ اور قومی اسمبلی کی رکنیت ختم کرنے کا الیکشن کمیشن کا نوٹیفکیشن ختم کیا جائے۔

درخواست میں ان موقف اختیار کیا گیا ہے کہ موجودہ رٹ دائر ہونے سے قبل بینک اکاﺅنٹ اور اقامہ ظاہر کر چکا تھا۔اس موقع پر سپریم کورٹ نے خواجہ آصف کی نااہلی کے خلاف اپیل کی سماعت کےلیے جسٹس عمر عطاءبندیال کی سربراہی میں جسٹس فیصل عرب اور جسٹس سجاد علی شاہ پر مشتمل تین رکنی خصوصی بینچ تشکیل دے دیا ہے۔

(جاری ہے)

سپریم کورٹ کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق خصوصی بینچ پیر 7 مئی کو دوپہر ڈیرھ بجے اپیل پر سماعت کرے گا۔

واضح رہے کہ اسلام آباد ہائیکورٹ نے خواجہ آصف کے مخالف امیدوار تحریک انصاف کے عثمان ڈار کی درخواست پر 26 اپریل کو فیصلہ سناتے ہوئے خواجہ آصف کو نااہل قرار دیا تھا اور آئین کے آرٹیکل 62 ون ایف کے تحت ان کی نااہلی بھی تاحیات قرار دی تھی۔۔خواجہ آصف کو26اپریل کو اسلام آباد ہائی کورٹ نے اقامہ رکھنے کے معاملے پر آئین کی شق 62 ون ایف کے تحت نااہل قرار دیا تھا۔

جس کے بعد الیکشن کمیشن نے بھی اسی روزمسلم لیگ نون کے راہنما خواجہ آصف کی قومی اسمبلی کی رکنیت ختم کرنے کے لیے نوٹیفیکیشن جاری کیا۔۔خواجہ آصف کے خلاف نااہلی کی درخواست دائر کرنے والے تحریک انصاف کے کارکن عثمان ڈار کو 2013 کے انتخابات میں خواجہ آصف کے ہاتھوں شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔خیال رہے کہ حال ہی میں سپریم کورٹ نے اپنے ایک فیصلے میں 62 ون ایف کے تحت نااہلی کی مدت کی تشریح کرتے ہوئے اس شق کے تحت ہونے والی نااہلی کو تاحیات قرار دیا تھا۔