پی ٹی آئی رہنما علیم خان کی سردار ایاز صادق پر لفظی گولہ باری

اب 2015 نہیں ہے، نہ تو بڑے میاں وزیر اعظم ہیں اور نہ ہی چھوٹے میاں وزیر اعلی ہیں، اب سردار ایاز صادق کی غیبی مدد کرنے کے لیے کوئی نہیں آئے گا

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان جمعہ جون 14:36

پی ٹی آئی رہنما علیم خان کی سردار ایاز صادق پر لفظی گولہ باری
لاہور (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔22 جون 2018ء) پاکستان تحریک انصاف کے رہنما علیم خان کا میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ فکر کی کوئی بات نہیں ہے۔میں این اے 131 میں ریٹرننگ آفیسر کے سامنے پیش ہوا تھا۔اس موقع پر علیم خان نے ن لیگی رہنما ایاز صادق پر بھی لفظی گولہ باری کی۔ این اے 129 کاانتخابی معرکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما ایازصادق بمقابلہ پاکستان تحریک انصاف کے رہنما علیم خان کے درمیان ہو گا۔

پاکستان تحریک انصاف کے رہنما علیم خان نے سردار ایاز صادق کے نام پیغام دیتے ہوئے کہا کہ ایک عید ملن پارٹی ہوئی ہے اورایاز صادق کے پاؤں اکھڑگئے ہیں۔اب 2015 نہیں ہے۔نہ تو بڑے میاں وزیر اعظم ہیں اور نہ ہی چھوٹے میاں وزیر اعلی ہیں۔۔علیم خان کا سردار ایاز صادق کو مخاطب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ نوازشریف اب آپ کی غیبی مدد نہیں کرسکیں گے،::ایاز صادق کو اب ریلوےکےفنڈز نہیں ملیں گے۔

(جاری ہے)

ایاز صادق کے پاس وفاقی حکومت کے محکموں کی مدد بھی نہیں ہوگی۔ اور نہ ہی اس بار آپ کو بے نظیر انکم سپورٹ سے مدد ملے گی۔یاد رہے ملک بھر میں عام انتخابات کا اعلان 25جولائی کو کیا گیا ہے اور کہا جا رہا ہے کہ یہ انتخابات ملکی تاریخ کے مہنگے ترین انتخابا ت ہو گے۔ ایک رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ 25 جولائی 2018 ء کو ہونے والے عام انتخابات پاک فوج کی زیر نگرانی ہوں گے۔

جب کہ عام انتخابات کے دوران سیکیورٹی خدشات بھی موجود ہیں جس کے پیش نظر سیکیورٹی فورسز 22جولائی اتوار کے روز ہی اپنی ذمہ داریاں سنبھال لیں گی۔ پنجاب میں چھ ہزار پولنگ اسٹیشن حساس قرار دئیے جا چکے ہیں۔ پنجاب سمیت ملک بھر میں کے حساس پولنگ اسٹیشنوں پر کلوز سرکٹ کیمرے بھی لگوائے جائیں گے۔عام انتخابات میں سیکیورٹی کے حوالے خاص انتظامات کیے گئے ہیں۔ 25 جولائی 2018 کو ہونے والے عام انتخابات ملکی تاریخ کے سب سے مہنگے اور سب سے بڑے انتخابات ہوں گے۔2018کے انتخابات کے حوالے سے الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ 2018کے انتخابی اخراجات کا تخمینہ21ارب ہے۔