Live Updates

وزیراعلیٰ عثمان بزدارکی زیرصدارت صوبائی کابینہ کا اجلاس، زرعی ٹیکس میں اضافے کی تجویز اتفاق رائے سے مسترد

نئے مالی سالن2021-22کے بجٹ کی تجاویز کی منظوری،صوبہ پنجاب کے نئے مالی سالن2021-22نکی بجٹ تجاویز اتفاق رائے سے منظور ضمنی بجٹ مالی سال2020-21ن، سالن2020-21نکے بجٹ کے نظرثانی شدہ تخمینہ جات اور مالیاتی بلن2021نکی بھی منظوری دی گئی کسان پر کوئی بوجھ نہیں ڈالا جائیگا،آج پی ٹی آئی کے دور میں کاشتکار خوشحال ہے،کاشتکار کو مزید خوشحال بنائینگے اور ریلیف دینگی: عثمان بزدار پنجاب کابینہ کاورکرز کی کم از کم اجرتن17500سے بڑھا کر 20ہزار روپے کرنے کا احسن فیصلہ‘نااہل اورناکام اپوزیشن کا کام صرف شور مچانا رہ گیا ہے،حکومت کے اچھے کاموں پر تنقید برائے تنقید کرنا انہیں زیب نہیں دیتا،وزیر اعلیٰ پنجاب

پیر جون 20:34

وزیراعلیٰ عثمان بزدارکی زیرصدارت صوبائی کابینہ کا اجلاس، زرعی ٹیکس ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 14 جون2021ء) وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارکی زیرصدارت پیر کو90 شاہراہ قائد اعظم پر صوبائی کابینہ کا اجلاس منعقد ہوا جس میں نئے مالی سالن2021-22کے بجٹ کی تجاویز کی منظوری دی گئی-کابینہ اجلاس میں صوبہ پنجاب کے نئے مالی سالن2021-22نکی بجٹ تجاویز اتفاق رائے سے منظورکی گئیں -کابینہ نے ضمنی بجٹ مالی سال2020-21کی منظوری دی-کابینہ کے اجلاس میں مالی سالن2020-21کے بجٹ کے نظرثانی شدہ تخمینہ جات کی بھی منظوری دی گئی-اجلاس میں مالیاتی بلن2021نکی بھی منظوری دی گئی-پنجاب کابینہ نے صوبائی ملازمین کی تنخواہوں اور پنشن میں 10 فیصد اضافے کی منظوری دی ہی-کابینہ اجلاس میں بورڈ آف ریونیو کی جانب سے زرعی ٹیکس میں اضافے کی تجویز پیش کی گئی-وزیراعلی عثمان بزدار نے زرعی ٹیکس میں اضافے کی تجویز کو رد کر دیا-وزیراعلی عثمان بزدار اور پنجاب کابینہ نے زرعی ٹیکس بڑھانے کی تجویز کو اتفاق رائے سے مسترد کیا-وزیر اعلی عثمان بزدار نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کسان پر کوئی بوجھ نہیں ڈالا جائے گا۔

(جاری ہے)

آج پی ٹی آئی کے دور میں کاشت کار خوشحال ہے۔کاشتکار کو مزید خوشحال بنائیں گے اور ریلیف دیں گے۔پنجاب کابینہ نے ورکرز کی کم از کم اجرت میں اضافے کی منظوری دی اور ورکرز کی کم از کم اجرتن17500سے بڑھا کر 20ہزار روپے کرنے کا احسن فیصلہ کیا گیا ہے - وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے بہترین بجٹ پر صوبائی وزیر خزانہ ہاشم جواں بخت، مشیر ڈاکٹر سلمان شاہ، چیف سیکرٹری، چیئرمین منصوبہ بندی و ترقیات، سیکرٹری خزانہ اور متعلقہ محکموں کے افسران کی کارکردگی کی تعریف کی -وزیر اعلی عثمان بزدار نے کہا کہ پنجاب کی تاریخ میں پہلی بار ترقیاتی بجٹ میں ریکارڈ اضافہ کیا جارہا ہے۔

پہلی بار ہر ضلع کا علیحدہ ڈویلپمنٹ پیکیج تیار کیا گیا ہے۔بجٹ میں عام آدمی کو ریلیف دینے کے لئے اقدامات تجویز کئے گئے ہیں -بجٹ میں حقیقت پسندانہ اہداف مقرر کئے گئے ہیں -صوبے کے عوام کی بنیادی ضروریات کو مدنظر رکھ کر ترجیحات کا تعین کیا گیا ہے۔ یہ بجٹ اعدادوشمار کی جادوگری نہیں بلکہ متوازن ترقی پر مبنی حقیقی دستاویزہی-نااہل اورناکام اپوزیشن کا کام صرف شور مچانا رہ گیا ہے۔

حکومت کے اچھے کاموں پر تنقید برائے تنقید کرنا انہیں زیب نہیں دیتا۔اپوزیشن نے کورونا وباء کے دوران بھی صرف واویلا کیااورعوام کو تنہا چھوڑے رکھا-بجٹ اجلاس کے دوران اراکین اسمبلی سے مسلسل رابطہ رہے گا۔ اجلاس میں کابینہ سٹینڈنگ کمیٹی برائے فنانس اینڈ ڈویلپمنٹ کی57 ویں اور58 ویں اجلاسوں کے فیصلوں کی توثیق کی گئی-اجلاس میں کابینہ سٹینڈنگ کمیٹی برائے قانونی امور کی60 ویں،61 ویں اور62 ویں اجلاسوں کے فیصلوں کی توثیق کی گئی-سیکرٹری خزانہ نے صوبائی بجٹ اور چیرمین پی اینڈ ڈی نے سالانہ ترقیاتی پروگرام کے اہم خد و خال کے حوالے سے کابینہ کو بریفنگ دی-اجلاس میں صوبائی وزراء، مشیران، معاونین خصوصی، چیف سیکرٹری اور متعلقہ محکموں کے سیکرٹریز نے شرکت کی-
پاکستان میں کرونا وائرس کی چوتھی لہر سے متعلق تازہ ترین معلومات