ضرورت ایجاد کی ماں ہے ،عمران خان سے اتحاد ہوسکتا ہے ،آصف علی زرداری

پیپلزپارٹی نے جس جمہوریت کیلئے جانوں کے نذرانے پیش کیے نوازشریف نے ہماری جمہوری کوششوں پر پانی پھیرا دیا،خلائی مخلوق کے حوالے سے نوازشریف خود وضاحت کریں،سابق صدر کی گفتگو

جمعہ مئی 21:25

ضرورت ایجاد کی ماں ہے ،عمران خان سے اتحاد ہوسکتا ہے ،آصف علی زرداری
اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 04 مئی2018ء) سابق صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ ضرورت ایجاد کی ماں ہے ، ضرورت پڑی تو الیکشن کے بعد عمران خان سے اتحاد ہوسکتا ہے تاہم پیپلزپارٹی کو وزیراعظم ہائوس میں بیٹھنے کا شوق نہیں ، پیپلزپارٹی نے جس جمہوریت کیلئے جانوں کے نذرانے پیش کیے نوازشریف نے ہماری جمہوری کوششوں پر پانی پھیرا دیا،خلائی مخلوق کے حوالے سے نوازشریف خود وضاحت کریں ۔

ان خیالات کا اظہار آصف علی زرداری نے ثمینہ خالد گھرکی کی والدہ کے انتقال پر اظہار افسوس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔۔آصف علی زرداری نے کہا کہ ہم نے جمہوریت کیلئے جیلیں کاٹیں اور ذوالفقارعلی بھٹو ، بی بی شہید سمیت ہمارے کارکنوں نے بھی جمہوریت کیلئے شہادتیں پیش کیں اور ہم نے جمہوریت کو پروان چڑھایا مگر میاں صاحب نے ہمیشہ جمہوریت کو نقصان پہنچایااور نوازشریف نے ہماری جمہوریت کیلئے کی جانیوالی کوششوں پر پانی پھیرا دیا ۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہاکہ آج ملک میں کمزور ترین جمہوریت چل رہی ہے ایسی جمہوریت چل رہی ہے جو کسی بھی وقت ختم ہو سکتی ہے اس سے بڑا اور ملک کے لئے کیا سانحہ ہو سکتا ہے ۔۔عمران خان کیساتھ اتحاد کے حوالے سے آصف علی زرداری کا کہنا تھا کہ سینیٹ الیکشن میں عمران خان کیساتھ اتحاد ہوا اور ضرورت ایجاد کی ماں ہے آئندہ الیکشن کے بعد بھی عمران خان سے اتحاد ہوسکتا ہے کیونکہ ضرورت کے تحت ہم نے سینیٹ الیکشن میں ملے تھے اور آئندہ بھی ضرورت کے تحت اتحاد کرسکتے ہیںتاہم اس کے بارے میں فیصلہ آئندہ الیکشن کے بعد ہی کیا جائے گا ۔

ایک اور سوال پر انہوں نے کہاکہ مجھے وزیراعظم ہائوس بیٹھنے کوئی شوق نہیں ہے ہم اپوزیشن میں بھی بیٹھ سکتے ہیں اور ملکی مسائل پر توجہ دے سکتے ہیں ۔خلائی مخلوق کے حوالے سے کیے گئے سوال پر انہوں نے کہاکہ نوازشریف کو خلائی مخلوق کے حوالے سے وضاحت کرنی چاہیے ۔انہوں نے کہاکہ نوازشریف نے ماضی میں اسی خلائی مخلوق کے ساتھ ملکر چھانگا مانگا لگایا اور ہمارے کیخلاف عدالتوں میں گئے ۔عمران زرداری بھائی بھائی کے سوال پر آصف زرداری کا کہنا تھا کہ سیاست میں یہ سب چلتا رہتا ہے اور یہ سیاسی ڈائیلاگ ہیں تاہم الیکشن وقت پر ہوں گے۔