جمہوریت، آئین اور اٹھارہویں ترمیم کو کوئی خطرہ نہیں،

سیاسی جماعتوں کا واولا غیر ضرور ی ہے، شاہ محمود قریشی

ہفتہ فروری 17:11

جمہوریت، آئین اور اٹھارہویں ترمیم کو کوئی خطرہ نہیں،
ملتان(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 02 فروری2019ء) وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے واضح کیا ہے کہ ملک میں جمہوریت، آئین اور اٹھارہویں ترمیم کو کوئی خطرہ نہیں، اٹھارہویں ترمیم پر سیاسی جماعتوں کا واولا غیر ضرور ی ہے ، پاکستان میں فیصلہ کن قوت صرف اور صرف عوام ہیں اور وہ فیصلہ کرچکے ہیں، چاہتے ہیں عازمین حج کو زیادہ سے زیادہ سہولیات فراہم کریں ، پیپلز پارٹی اور ن لیگ کل تک آپس میں دست و گریباں تھے آج ایک ہوگئے ۔

ہفتہ کو یہاں میڈیا سے گفتگو کے دوران شاہ محمود قریشی نے حج پالیسی سے متعلق کہا کہ خواہش ہے کہ زیادہ سے زیادہ پاکستانی فریضہ حج ادا کرسکیں، چاہتے ہیں کہ عازمین حج کو زیادہ سے زیادہ سہولیات فراہم کریں۔انہوں نے کہا کہ ڈیل اگر ہوئی ہے تو پیپلزپارٹی اور (ن) لیگ کے درمیان ہوئی ہے،کل تک پیپلزپارٹی اور (ن) لیگ باہم دست و گریبان تھے، آج دونوں مک مکا کربیٹھے ہیں۔

(جاری ہے)

وزیرخارجہ کا نے کہاکہ ملک میں جمہوریت، آئین اور اٹھارہویں ترمیم کو کوئی خطرہ نہیں، اٹھارہویں ترمیم پر سیاسی جماعتیں غیر ضروری واویلا کررہی ہیں۔شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستان میں فیصلہ کن قوت صرف اور صرف عوام ہیں اور وہ فیصلہ کرچکے ہیں۔ایک سوال کے جواب میں انہوںنے کہاکہ پی پی اور (ن) لیگ کے رہنماؤں پر مقدمے ہمارے دور میں نہیں بنے۔