بلاول بھٹو نے احسان اللہ احسان کے فرار سے متعلق حکومت سے جواب طلب کرلیا

پیپلزپارٹی کے چیئرمین نے قومی اسمبلی سیکرٹریٹ میں جمع کروائے گئے تحریری سوالات میں وزارت داخلہ سے وضاحت مانگی ہے

Mian Nadeem میاں محمد ندیم پیر فروری 21:45

بلاول بھٹو نے احسان اللہ احسان کے فرار سے متعلق حکومت سے جواب طلب کرلیا
اسلام آباد(اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین-انٹرنیشنل پریس ایجنسی۔17 فروری۔2020ء) سرکاری سطح پر کالعدم تنظیم تحریک طالبان پاکستان کے سابق ترجمان احسان اللہ احسان کے فرار کی تصدیق کے بعد چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے حکومت سے تحریری جواب مانگ لیا ہے. بلاول بھٹو نے قومی اسمبلی سیکرٹریٹ میں تحریری سوال جمع کرا وایا ہے جس میں بلاول بھٹو نے وزیر داخلہ کسے احسان اللہ احسان سے متعلق جواب مانگا ہے.

ذرائع کے مطابق بلاول بھٹو نے 12 فروری کو اپنے سوالات قومی اسمبلی سیکرٹریٹ میں جمع کرائے ہیں قومی اسمبلی سیکرٹریٹ نے بلاول بھٹو کے تحریری سوالات کے وصول ہونے کی تصدیق بھی کی ہے.

(جاری ہے)

ذرائع کے مطابق بلاول بھٹو نے سوال کیا ہے کہ بتایا جائے کہ کالعدم تحریک طالبان کے سابق ترجمان احسان اللہ احسان کیا زیرحراست ہیں؟بلاول بھٹو نے تحریرطور پریہ بھی پوچھا ہے کہ اگر احسان اللہ احسان زیرحراست نہیں تو کیا اس کے فرار کی خبریں درست ہیں؟ احسان اللہ احسان کا موجودہ اسٹیٹس کیا ہے؟خیال رہے کہ وزیر داخلہ اعجاز شاہ نے اس سے قبل احسان اللہ احسان کے فرار کی پہلی بار سرکاری سطح پر باقاعدہ تصدیق کر دی تھی.

وزیر داخلہ اعجاز شاہ سے احسان اللہ احسان کے فرار ہونے سے متعلق خبر کی صداقت پر سوال کیا تو انہوں نے کہا تھا کہ میں نے بھی یہ خبر سنی ہے، اس سے متعلق ریاست باخبر ہے.انہوں نے کہا تھا کہ مجھے پتہ ہے وہ چلا گیا ہے اس لیے خبر کی تصدیق کر رہا ہوں، اس پر بہت کا کام ہو رہا ہے آپ کو جلد خوش خبری ملے گی یاد رہے کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے سابق ترجمان احسان اللہ احسان نے اپنے ایک آڈیو بیان میں دعوی کیا تھا کہ وہ سرکاری تحویل سے فرار ہو کر ترکی پہنچ چکے ہیں.