کھلاڑیوں سےپرفارمنس کا مطالبہ کیا جائے،کوئی مطلوبہ نتائج نہیں دیتا توخداحافظ کہنا بہتر ہوگا:شعیب اختر

چیف سلیکٹر بننے کی باتیں میڈیا میں سن رہا ہوں ،کرکٹ بورڈ نے رابطہ نہیں کیا: سابق سپیڈ سٹار

Zeeshan Mehtab ذیشان مہتاب بدھ ستمبر 14:21

کھلاڑیوں سےپرفارمنس کا مطالبہ کیا جائے،کوئی مطلوبہ نتائج نہیں دیتا ..
لاہور (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار ۔ یکم ستمبر 2020ء ) فاسٹ بولر شعیب اختر نے قومی ٹیم کی دفاعی حکمت عملی کو نقصان دہ قرار دے دیا۔ ایک انٹرویو میں راولپنڈی ایکسپریس نے کہا کہ چیف سلیکٹر اور کوچ دونوں کو جراتمندانہ فیصلے کرنا ہوں گے، کھلاڑیوں سے پرفارمنس کا مطالبہ کیا جائے، اگر کوئی مطلوبہ نتائج نہیں دیتا تو پھر خداحافظ کہنا بہتر ہوگا۔

انھوں نے کہا کہ جدید کرکٹ میں کامیابی پانے کیلیے جارحانہ کرکٹ کھیلنا ضروری ہے، دفاعی حکمت عملی کا فائدہ کم اور نقصان زیادہ ہوتا ہے، پاکستان نے ایک سیشن خراب کھیل کر ٹیسٹ سیریز گنوا دی،ہم گذشتہ 15 سال سے دفاعی طرز کی کرکٹ کھیل رہے ہیں۔ 45 سالہ شعیب اختر نے کہا کہ دورئہ انگلینڈ ہمیشہ مشکل ہوتا ہے لیکن اس سیریز میں تجربہ کار کوچز کی جانب سے نوجوانوں تک وہ علم منتقل ہوتا نظر نہیں آیا جس کی توقع تھی، ہمارے کھلاڑی بہت باصلاحیت ہیں، کرکٹ کو ٹھیک کرنا ہے تو سوچ تبدیل کرنا ہوگی۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ اسد شفیق اتنی کرکٹ کھیل چکا لیکن اب بھی آؤٹ ہو تو ایسا لگتا ہے جیسے پہلا میچ کھیل رہا ہو، ایک وقت تھا جب بھارتی کھلاڑی پاکستانیوں جیسا بننا چاہتے تھے، اب حالات اس کے برعکس ہیں،آپ اس سے اندازہ لگا سکتے ہیں کہ ہم کرکٹ میں کس مقام پر کھڑے ہیں۔