بھارت مقبوضہ جموںوکشمیر سے فوری پابندیاں اٹھائے، ہائی کمیشن کی ٹیم کو دورہ کرنے کی اجازت دے ، برطانیہ

جمعرات جنوری 13:08

بھارت مقبوضہ جموںوکشمیر سے فوری پابندیاں اٹھائے، ہائی کمیشن کی ٹیم ..
لندن(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 14 جنوری2021ء) برطانیہ نے بھارت پر زوردیا ہے کہ وہ اپنے غیر قانونی زیر تسلط جموںوکشمیرمیںعائد تمام پابندیاں ختم کرے اوروہاں کی زمینی صورتحال کا جائزہ لینے کیلئے دلی میں برطانوی ہائی کمیشن کی ایک ٹیم کو مقبوضہ وادی کا دورہ کرنے کی اجازت دے ۔کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق یہ مطالبہ برطانیہ کے وزیر انصاف رابرٹ بکلینڈ نے ویسٹ منسٹر ہال میںجموںوکشمیر کی سیاسی صورتحال کے بارے میں ایک مباحثے میں ارکان پارلیمنٹ کے سوالوںکا جواب دیتے ہوئے کیا ۔

یہ مباحثہ برطانوی اراکن پارلیمنٹ کی طرف سے بھارت میں مسلمانوں ، عیسائیوں اور دیگر اقلیتی گروپوں پرمظالم پر تفصیلی غور و خوص کے ایک دن بعد منعقد ہوا۔ گزشتہ ہفتے برطانوی ارکان پارلیمنٹ نے بھارت میں نئے متنازعہ زرعی قوانین کی منسوخی کیلئے لابنگ کی تھی۔

(جاری ہے)

رابرٹ بکلینڈ نے کہا کہ برطانوی وزیر اعظم بورس جانسن علاقائی کشیدگی دور کرنے ، کنٹرول لائن پر جنگ بندی ، تعلقات میں بہتری اور ضبط و تحمل کا مظاہر ہ کرنے کی غرض سے اپنے بھارتی اور پاکستانی ہم منصوبوں کے سا تھ رابطے میں ہیں ۔

انہوںنے کہا کہ ہم مسلسل بھارت کوانسانی حقوق کی پامالیوں سے متعلق اپنی تشویش سے آگاہ کر رہے ہیں اور مقبوضہ علاقے میں تمام پابندیوں کو جلد از جلد ختم کرنے پر زوردے رہے ہیں۔ برطانیہ کے خارجہ ، دولت مشترکہ اور ترقیاتی دفتر (ایف سی ڈی او) کے وزیر نائیجل ایڈمس نے اس موقع پر کہاکہ ہمیں یقین ہے کہ بھارت اور پاکستان کشمیری عوام کی خواہشات کو مدنظر رکھتے ہوئے تنازعہ کشمیر کا کوئی پائیدار سیاسی حل تلاش کرلیں گے ۔