Live Updates

ججوں کے قدموں میں ڈھیر ہونے کے بعد عمران خان کا انصاف اب قوم کے ذمے ہے

ریاست پر بدترین آمریت کا قبضہ اور جنگل کے قانون کا غلبہ ہے، 9 مئی کیسز میں ضمانت مسترد کروانے کا مقصد مزید ناحق قید رکھنا ہے، ترجمان تحریک انصاف کا الزام

Sanaullah Nagra ثنااللہ ناگرہ بدھ 10 جولائی 2024 18:48

ججوں کے قدموں میں ڈھیر ہونے کے بعد عمران خان کا انصاف اب قوم کے ذمے ہے
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 10 جولائی 2024ء) ترجمان تحریک انصاف نے الزام عائد کیا ہے کہ ججوں کے قدموں میں ڈھیر ہونے کے بعد عمران خان کا انصاف اب قوم کے ذمے ہے، ریاست پر بدترین آمریت کا قبضہ اور جنگل کے قانون کا غلبہ ہے، 9 مئی کیسز میں ضمانت مسترد کروانے کا مقصد مزید ناحق قید رکھنا ہے۔ پی ٹی آئی ایکس پر ترجمان پی ٹی آئی نے اپنے ردعمل میں کہا کہ بانی چیئرمین کی ضمانت کی درخواستوں پر دیے گئے عدالتی فیصلے پر گہری تشویش کا اظہار ہے۔

ریاست پر بدترین شخصی آمریت کا قبضہ اور جنگل کے قانون کا غلبہ ہے، عدلیہ کا آئین اور جمہور مخالف قوتوں کے کے سامنے سرنگوں گرجانا ملک میں عدل و انصاف کی دردناک موت کا سب سے بڑا محرّک ہے، بانی چئیرمین عمران خان کی تمام جعلی و گھٹیا کیسز میں بریت کے بعد 9 مئی کے بوگس مقدمات  میں  ضمانت مسترد کروانے کا مقصد انہیں مزید ناحق قید رکھنا ہے، 9 مئی کے من گھڑت کیسز کو بنیاد بنا کر گزشتہ ایک سال سے پروپیگنڈہ کرنے والے آج تک کسی عدالت میں عمران خان پر لگائے گئے الزامات  کے حوالے سے ایک بھی ثبوت پیش نہیں کرسکے۔

(جاری ہے)

جنگل راج دھونس اور ترغیب کی دو دھاری تلوار سے ہماری عدلیہ کو اپنے اشاروں پر نچانے اور شہریوں کے بنیادی حقوق غصب کرنے میں مصروف ہے، آئین و انصاف کے ساتھ کھڑے ہونے والے ججز فردِ واحد کی قائم کردہ آمریت کے نشانے پر ہیں۔ آئین، قانون اور جمہوریت کے نام لیواؤں کو سماج کے ہر شعبے سے نکالنے اور نشانِ عبرت بنانے کے مکروہ سلسلے کی راہ نہ روکی گئی تو ملک کا کوئی مستقبل نہیں۔ جھوٹے، بےبنیاد اور انتقام پر مبنی سینکڑوں سیاسی مقدمات سے جو اہداف حاصل نہیں ہوسکے وہ کینگرو عدالتوں کے مضحکہ خیز اور بدنام فیصلوں سے بھی حاصل نہ ہوپائیں گے۔ ججوں کے جنگل راج کے قدموں میں ڈھیر ہونے کے بعد عمران خان کا انصاف اب قوم کے ذمے ہے اور قوم جلد اپنا فیصلہ سنائے گی۔
Live پی ٹی آئی پر پابندی سے متعلق تازہ ترین معلومات