بند کریں
صحت صحت کی خبریںسرکاری اسپتالوں میں صحت کی جدید سہولیات کی فراہمی کے لئے نجی شعبے کی شراکت کے لئے حکمت عملی ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 29/08/2014 - 20:24:40 وقت اشاعت: 29/08/2014 - 19:30:17 وقت اشاعت: 29/08/2014 - 19:02:28 وقت اشاعت: 29/08/2014 - 18:58:08 وقت اشاعت: 29/08/2014 - 18:27:15 وقت اشاعت: 29/08/2014 - 18:23:11 وقت اشاعت: 29/08/2014 - 16:40:35 وقت اشاعت: 29/08/2014 - 16:32:29 وقت اشاعت: 29/08/2014 - 16:31:00 وقت اشاعت: 29/08/2014 - 16:21:53 وقت اشاعت: 29/08/2014 - 16:21:31

سرکاری اسپتالوں میں صحت کی جدید سہولیات کی فراہمی کے لئے نجی شعبے کی شراکت کے لئے حکمت عملی تشکیل دے دی گئی ، ڈاکٹر سکندر میندھرو

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔29اگست۔2014ء)سندھ کے پارلیمانی امور ماحولیات وساحلی ترقی کے وزیر اور سندھ ہیلتھ ایڈوائزری بورڈ کے چےئرمین ڈاکٹر سکندر میندھرو کی زیر صدرارت ایک اہم اجلاس کل ان کے دفتر سندھ اسمبلی میں منعقد ہوا, اجلاس میں سندھ کے سرکاری اسپتالوں میں عوام کو جدید اور معیاری طبی سہولیات کی فراہمی کے لئے صحت کی خدمات سے وابستہ نجی شعبے کے مقبول اداروں کے ساتھ مل کر حکمت عملی تشکیل دی گئی۔

اجلاس میں سیکریٹری صحت سندھ اقبال حسین درانی کے علاوہ سندھ ہیلتھ ایڈوائزری بورڈ کے افسران ، انڈس ہاسپٹل اور بحریہ فاؤنڈیشن کے نمائندوں کے علاوہ محکمہ قانون سندھ کے سینئر افسران نے شرکت کی۔اس موقع پر صوبائی وزیر ڈاکٹر سکندر میندھرو نے کہا کہ سندھ حکومت سرکاری اسپتالوں میں خدمت کے معیار کو بلند کرنے اور عوام کو ان اسپتالوں میں اعلیٰ اور معیاری صحت کی سہولیات کی فراہمی کے لئے نجی شعبہ کے تجربے اور خدمات کا فائدہ عوام تک پہنچانا چاہتی ہے۔

اجلاس میں تفصیلی غو ر و خوض کے بعد فیصلہ کیاگیاکہ پہلے مرحلے میں لیاری جنرل اسپتال کراچی ، سول اسپتال حیدرآباد اور ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر اسپتال بدین کو نجی شعبہ کے حوالے کیا جائے گا اور اس ضمن میں حکومت ان اسپتالوں کے سالانہ فنڈز کو ان اسپتالوں پر خرچ کرنے کا اختیار نجی شعبہ کو دے گی جبکہ نجی شعبہ کی طرف سے اعلیٰ تعلیم یافتہ ڈاکٹرز ، طبی عملہ، ادویات ، خدمات اور انتظامی امور کے لئے مالی اور افرادی معاونت فراہم کی جائے گی۔

اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیا گیاکہ ان اسپتالوں کی انتظامی اور طبی خدمات کی نگرانی کے لئے نجی اور سرکاری شعبوں سے طبی ماہرین کے علاوہ عوامی نمائندوں اور مخیر معززین کا بورڈ تشکیل دیا جائے گا۔اجلاس میں شریک نجی اداروں کے نمائندوں کے ساتھ یہ طے کیا گیا کہ وہ آئندہ دس یوم کے اندر مذکورہ تینوں سرکاری اسپتالوں کے جملہ امور کا جائزہ لے کر اس مقصد کے لئے اگلے اجلاس میں اپنی رپورٹ حکومت کو دیں گے جس کے بعد حکومت اور ان نجی ادارو ں کے مابین اسپتالوں کے حوالے کئے جانے کے معاہدے پر دستخط ہوں گے۔

29/08/2014 - 18:23:11 :وقت اشاعت