بند کریں
صحت صحت کی خبریںبرڈ فلو سے بچنے کیلئے عوام پالتو پرندوں اور مرغیوں کو ہاتھ نہ لگائیں ۔وزارت صحت۔۔۔برڈ فلو ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 06/02/2008 - 13:01:57 وقت اشاعت: 05/02/2008 - 14:41:48 وقت اشاعت: 04/02/2008 - 16:04:10 وقت اشاعت: 04/02/2008 - 14:17:58 وقت اشاعت: 03/02/2008 - 12:40:37 وقت اشاعت: 02/02/2008 - 17:56:26 وقت اشاعت: 01/02/2008 - 15:49:06 وقت اشاعت: 31/01/2008 - 16:35:22 وقت اشاعت: 31/01/2008 - 12:55:32 وقت اشاعت: 31/01/2008 - 12:20:12 وقت اشاعت: 29/01/2008 - 16:10:58

برڈ فلو سے بچنے کیلئے عوام پالتو پرندوں اور مرغیوں کو ہاتھ نہ لگائیں ۔وزارت صحت۔۔۔برڈ فلو کنٹرول کیلئے ایک ارب اٹھارہ کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں پریس کانفرنس

اسلام آباد (اردوپوائنٹ اخبا ر تازہ ترین02 فروری2008 ) وزارت صحت نے عوام سے اپیل کی ہے کہ وہ برڈ فلو سے بچنے کیلئے گھروں کے پالتوں پرندوں اور مرغیوں کو ہاتھ لگانے سے اجتناب کریں اور تمام حفاظتی انتظامات کو مدنظر رکھ کر دیکھ بھال کی جائے مرغی کا گوشت برڈ فلو کے وائرس سے پاک اور انسانی جان کیلئے خطرناک نہیں گزشتہ سال 47 مقامات پر برڈ فلو پایا گیا جہاں پر ایک لاکھ اسی ہزار مرغیاں تلف کی گئیں ، حکومت نے برڈ فلو کو کنٹرول کرنے کیلئے 1 ارب اٹھارہ کروڑ روپے مختص کئے ہیں جبکہ برڈ فلو پر نظر رکھنے کیلئے اٹھارہ ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں ، ہفتہ کو پریس انفارمیشن ڈیپارٹمنٹ کے میڈیا سنٹر میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزارت صحت کے ترجمان جائنٹ سیکرٹری اوریا مقبول جان ، قومی ادارہ صحت کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر جنرل سعید انور اور دیگر حکام نے برڈ فلو کے حوالے سے تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ دو ماہ پہلے ایبٹ آباد مانسہرہ کے علاقوں میں برڈ فلو کا وائرس پایا گیا جہاں پر دو پولٹری فارم سیل کر کے متاثرہ مرغیوں کو تلف کیا گیا ، تاہم کچھ لوگ متاثر ہیں انہوں نے کہا کہ ضلعی حکومت اور پولٹری فارم کے مالکان کا قرض ہے کہ وہ برڈ فلو سے بچاؤ کیلئے احتیاطی تدابیر اختیار کریں ، انہوں نے کہا کہ وزارت صحت نے ملک بھر میں کہیں بھی برڈ فلو کا خطرہ پیدا ہونے کی صورت میں ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کیلئے تمام ہسپتالوں میں ہائی الرٹ کردیا ہے اور ویکسین کی وفار مقدار موجود ہے ، ترجمان نے کہا کہ سپین میں 1918ء میں برڈ فلو کی وجہ سے چار کروڑ لوگ مر گئے تھے ، پاکستان میں پہلے فروری 2006ء میں برڈ فلو 66 جگہوں پر پایا گیا اڑھائی لاکھ مرغیاں تلف کی گئیں ، انہوں نے کہا کہ اسی طرح اس سال 2007ء میں 47 مقامات پر برڈ فلو کی نشاندہی ہوئی ایک لاکھ اسی ہزار مرغیاں تلف کی گئی اوریا مقبول جان نے کہا کہ حکومت تمام وسائل کو بروئے کار لارہی ہے تاکہ لوگوں کو برڈ فلو سے بچایا جاسکے اور اس مقصد کیلئے برڈ فلو کے کنٹرول کیلئے ایک ارب اٹھارہ کروڑ روپے مختص کئے گئے ، ایک سوال کے جواب میں ترجمان نے کہا کہ زندہ مرغی اور پرندوں کو ہینڈل کرنے والے برڈ فلو کا شکار ہوسکتے ہیں ، احتیاط کی جائے تاہم مرغی کا گوشت کھانے سے برڈ فلو نہیں ہوتا گوشت نقصان دہ نہیں ہے ۔


02/02/2008 - 17:56:26 :وقت اشاعت