دُبئی: ہم وطن جوڑے کو لُوٹ مار کے دوران زخمی کرنے والا بنگلہ دیشی گرفتار

ملزم نے واردات کے دوران جوڑے کو شیشے کی ٹوٹی بوتل کے وار کر کے زخمی کر دیا تھا

Muhammad Irfan محمد عرفان بدھ جولائی 12:06

دُبئی: ہم وطن جوڑے کو لُوٹ مار کے دوران زخمی کرنے والا بنگلہ دیشی گرفتار
دُبئی( اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین- 3 جُولائی 2019ء) دُبئی پولیس نے ایک بنگلہ دیشی باشندے کو شادی شُدہ جوڑے پر حملہ کر کے زخمی کرنے اور اُن سے لوٹ مار کرنے کے جُرم میں گرفتار کر لیا ہے۔ استغاثہ کے مطابق ملزم اپنے ایک ساتھی کے ہمراہ اپنے ہم وطن بنگالی جوڑے کے کمرے میں گھُس گیا اور وہاں موجود 25 سالہ خاتون سے دو ہزار روپے کی رقم چھین لی اور اُس پر شیشے کی ٹوٹی ہوئی بوتل سے کئی وار کیے۔

جس سے خاتون زخمی ہو گئی۔ واردات کے دوران ملزم نے خاتون کی اُنگلی سے سونے کی انگوٹھی بھی نکالنے کی کوشش کی مگر شدید مزاحمت کے باعث وہ اپنی اس کوشش میں کامیاب نہ ہو سکا اور واردات انجام دینے کے بعد موقع سے فرار ہو گیا۔ یہ واقعہ فروری کے مہینے میں پیش آیا تھا جس کی رپورت القصیص کے پولیس اسٹیشن میں درج کرائی گئی تھی۔

(جاری ہے)

30 سالہ بنگلہ دیشی الیکٹریشن نے پولیس کو بتایا کہ وہ اپنی انڈونیشین بیوی کے ساتھ النہدہ کے ایک فلیٹ کے ایک کمرے میں رہائش پذیر تھا۔

اس فلیٹ میں مجموعی طور پر 10 لوگ مختلف کمروں میں مقیم تھے۔ جن میں فیملیز اور کنوارے بھی شامل تھے۔ وقوعہ کے روز صبح ساڑھے پانچ بجے کسی نے ہمارے فلیٹ کے دروازے کی بیل بجائی۔میری بیوی نے دروازہ کھولا تو ملزم اور اُس کی ایک ساتھی کو وہاں کھڑا پایا۔ملزم کے ہاتھ میں ایک ٹوٹی ہوئی بوتل تھی۔ دونوں ملزمان میرے کمرے کے گھُس آئے اور ہمیں کہا کہ ہمارے پاس جو بھی قیمتی اشیاء ہیں وہ فوری طور پر ہمارے حوالے کر دیں۔

اسی دوران ملزم کی نظر میری بیوی کے ہاتھ کی اُنگلی میں سجی سونے کی انگوٹھی پر پڑی۔ جب میری بیوی نے یہ انگوٹھی دینے سے انکار کیا تو ملزم نے زبردستی انگوٹھی اُتارنے کی کوشش کے دوران ٹُوٹی ہوئی بوتل کا نوکیلا سرا میری بیوی کے بائیں بازو پر دے مارا۔ جب میں نے اُسے ایسا کرنے سے روکا تو اس نے میری کمر پر، دائیں گال اور کندھے بھی کئی وار کیے۔ جس کے بعد ملزم اپنے ساتھی کے ہمراہ موقع سے فرار ہو گیا۔ اس کے بعد میں نے اپنی بیوی کو شدید زخمی حالت میں ہسپتال منتقل کیا جہاں اُس کی جان ڈاکٹروں) نے بچا لی۔ اس مقدمے کی اگلی سماعت 21 جولائی 2019ء کو ہو گی۔

دبئی میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments