اُردو پوائنٹ پاکستان اسلام آباداسلام آباد کی خبریںضمنی انتخابات ،ْبیرون ملک پاکستانیوں کو انٹرنیٹ کے ذریعہ ووٹ دینے ..

ضمنی انتخابات ،ْبیرون ملک پاکستانیوں کو انٹرنیٹ کے ذریعہ ووٹ دینے کے طریقے پر تحفظات ہیں ،ْ شیری رحمن

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 ستمبر2018ء)پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کی رہنما سینیٹر شیری رحمان نے کہا ہے کہ آئندہ ضمنی انتخابات میں بیرون ملک پاکستانیوں کو انٹرنیٹ کے ذریعہ ووٹ دینے کے طریقے انٹرنیٹ ووٹنگ ’’آئی ووٹنگ‘‘پر اپنے تحفظات کا اظہار کرتے ہیں۔پیر کو اپنے ایک بیان میں نائب صدر پی پی پی پی سینیٹر شیری رحمان نے آئندہ ضمنی انتخابات میں بیرون ملک پاکستانیوں کو انٹرنیٹ کے ذریعہ ووٹ دینے کے طریقے انٹرنیٹ ووٹنگ ’’آئی ووٹنگ‘‘پر اپنے تحفظات کا اظہار کیا۔

انہوں نے کہا کہ یہ ایک اچھا قدم ہے ہم سب چاہتے ہیں کہ بیرون ملک پاکستانی اپنا ووٹ کا حق استعمال کرے لیکن جس طریقے اور جلد بازی میں اہمیت کے حامل اس پراجیکٹ کو شروع کیا جا رہا وہ تشویشناک اور خطرناک ہے۔

(خبر جاری ہے)

سینیٹر شیری رحمان نے کہا کہ سب سے پہلے اس سسٹم کوٹیکنالوجی ماہرین اور پارلیمان کی ایک مکمل نظرثانی سے گزرنا چاہئے۔ اگر ماہر یا پارلیمانی نگرانی کے بغیر اس منصوبے کو شروع کیا گیا تو اس کی ساکھ پر سوالات ہونگے۔

اگر الیکشن کمیشن پاکستان میں آر ٹی ایس کو سنبھال نہیں سکتی تووہ اپنے دائرہ کار سے باہر غیر ملکی سرزمینوں پر ووٹ کی شفافیت کو کیسے یقینی بنانئے گا یہ ایک جائز سوال ہے جس کا حکومت اور الیکشن کمیشن کو لازمی جواب دینا ہوگا۔ ای سی پی کو سافٹ ویئر کی مکمل شفافیت اور حفاظتی اقدامات پریقین دہانی کرانی ہوگی اور پارلیمان کو اعتماد میں لینا ہوگا کے اس پروگرام میں تمام تر حفاظتی اقدامات موجود ہیں۔شیری رحمان نے کہا کہ الیکشن کمیشن کو بتانا ہوگا کے سسٹم کو سائبرکرائم خاص طور پر ہیکنگ سے بچائے کے لئے ان کے پاس مکمل حفاظتی اقدامات موجود ہیں یا نہیں۔

اپنی رائے کا اظہار کریں -

اسلام آباد شہر کی مزید خبریں