کراچی میں پاک بحریہ کی آپریشنل مشق رباط2019- کے اختتامی اجلاس کا انعقاد

پاک بحریہ کی آپریشنل مشق رباط2019- کے اختتامی اجلاس کا انعقاد پاکستان نیوی ٹیکٹیکل اسکول ، کراچی میں منعقد ہوا۔ وائس چیف آف نیول اسٹاف وائس ایڈمرل کلیم شوکت نے تقریب میں بطور مہمان خصوصی شرکت کی

جمعرات اکتوبر 20:05

کراچی میں پاک بحریہ کی آپریشنل مشق رباط2019- کے اختتامی اجلاس کا انعقاد
اسلام اباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 10 اکتوبر2019ء) پاک بحریہ کی آپریشنل مشق رباط2019- کے اختتامی اجلاس کا انعقاد پاکستان نیوی ٹیکٹیکل اسکول ، کراچی میں منعقد ہوا۔ وائس چیف آف نیول اسٹاف وائس ایڈمرل کلیم شوکت نے تقریب میں بطور مہمان خصوصی شرکت کی۔

    اس موقع پر بات کرتے ہوئے وائس ایڈمرل کلیم شوکت نے پاک بحریہ کے لڑاکا یونٹس کی جنگی تیاریوں پر اطمینان کا اظہار کیا اورکہا کہ مشترکہ آپریشنل مشقیں عصر حاضر کی جدید جنگوں کا مظہر ہیں اور دفاع ِوطن کے لیے ضروری پیشہ ورانہ تربیت اور دفاعی تیاری کے لیے اہم ہیں۔

اس موقع پر مہمان خصوصی نے ملک کی سمندری حدود کے دفاع کے لیے افسران و جوانوں کے حوصلے ، تیاری کے درجے اورعزم کی تعریف کی۔

(جاری ہے)

انہوں نے زور دیا کہ پاکستان امن پسند ملک ہے اور خطے میں امن و خوشحالی چاہتا ہے۔ تاہم، کسی بھی جارحیت یا حملے کا بھر پور جواب دیا جائے گا۔ پاک بحریہ دشمن کی کسی بھی جارحیت کا جواب دینے کے لیے مکمل طور پر تیار ہے۔

انہوں نے شمالی بحیرہ عرب میں جنگی منصوبوں کا عملی مظاہرہ پیش کرنے والے مشق کے شرکاء کی کاوشوں کو سراہا۔    
    پاک بحریہ کے اثاثے اور جوان پاکستان کی سمندری حدود اور اس کے مفادات کے تحفظ کے لیے ہمہ وقت چوکس اور تیار ہیں۔ اپنے افسران اور جوانوں کی مہارت کو مزید بہتر کرنے کے لیے پاک بحریہ دیگر دفاعی افواج کے ساتھ مستقبل میں بھی ایسی مشترکہ مشقوں کا انعقاد کرتی رہے گی۔


    رباط مشقوں کا مقصد روایتی اور گرے ہائبرڈ جنگوں سے لاحق کثیر جہتی خطرات کے زیر سایہ پاک بحریہ کی جنگی صلاحیتوں کو موثربنانا تھا۔ اس ضمن میں رباط 2019- مشق کی خصوصی توجہ پاک فضائیہ کے شانہ بشانہ پاک بحریہ کے جنگی منصوبوں کا عملی مظاہرہ پیش کرنا تھا تاکہ دونوں فورسز کے مابین اعلیٰ درجے کی ہم آہنگی پیدا کی جائے۔

اسلام آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments