بھارت خود بلوچستان میں ہونیوالی دہشت گردی میں ملوث ، بھارتی آرمی چیف کو اپنے گریبان میں جھانکنا چاہیے ‘سعد رفیق

پاکستان امن کی بات کرتا ہے مگر بھارتی حکومت اور فوج ہٹ دھرمی کرتی ہے ،سیاسی جماعتوں کے درمیان کشمیر ایشوپر کوئی اختلاف نہیں چودہ اکتوبر کو جمہوریت کے علمبردار جیتیں گے ،نفرت کے بیج بونے ،الزامات لگانے والے شکست کھائیں گے‘رہنما (ن) لیگ کی میڈیا سے گفتگو

ہفتہ ستمبر 22:31

بھارت خود بلوچستان میں ہونیوالی دہشت گردی میں ملوث ، بھارتی آرمی چیف ..
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 22 ستمبر2018ء) مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما و حلقہ این اے 131کے ضمنی انتخاب کیلئے نامزد امیدوار خواجہ سعد رفیق نے بھارتی آرمی چیف کے بیان کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارت بلوچستان میں ہونیوالی دہشت گردی میں ملوث ہے ،بھارتی آرمی چیف کو الزام لگانے سے پہلے اپنے گریبان میں جھانکنا چاہیے۔میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاکستان امن کی بات کرنا چاہتاہے لیکن بھارتی حکومت ہٹ دھرمی کرتی ہے ،بھارتی فوج ہمیشہ ہی امن مذاکرات کو خراب کرتی ہے اور اب وہ کھل کر سامنے آ گئے ہیں ،بھارتی آرمی چیف کا بیان قابل افسوس اور قابل مذمت ہے ۔

دہشت گردی اور مذاکرات ساتھ ساتھ نہیں چل سکتے ،مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج جو دہشت گردی کررہی ہے اسکا نوٹس لینا چاہئے۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ سیاسی جماعتوں کے درمیان کشمیر ایشوپر کوئی اختلاف نہیں ،جنگیں پاکستان نہیں بلکہ بھارتی فوج اور حکومت نے مسلط کی ہیں،بھارت بلوچستان میں دہشت گردی میں ملوث ہے ،خود بھارتی مسلمانوں اورکشمیریوں پر بربریت سب کے سامنے ہے،بھارتی آرمی چیف کو الزام لگانے سے پہلے اپنے گریبان میں جھانکنا چاہئے۔ خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ چالیس دن کی عارضی کارکردگی کی بنیاد پر ہمایوں اختر کو ضمنی انتخاب کیلئے ٹکٹ دیا گیا جس کی کوئی جماعت نہیں ۔چودہ اکتوبر کو جمہوریت کے علمبردار جیتیں گے اور نفرت کے بیج بونے ،الزامات لگانے والے شکست کھائیں گے۔