بارش برسانے والا سسٹم بلوچستان میں داخل

چمن اور گردونواح میں گرج چمک کیساتھ بارش اور ژالہ باری

Mian Nadeem میاں محمد ندیم جمعہ فروری 01:32

بارش برسانے والا سسٹم بلوچستان میں داخل
چمن(اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین-انٹرنیشنل پریس ایجنسی۔28 فروری۔2020ء) ایران سے بارش برسانے والا سسٹم بلوچستان میں داخل ہونے کیساتھ صوبے کے مختلف علاقوں میں بارش شروع ہوگئی ہے‘چمن شہر اور گردونواح میں گرج چمک کیساتھ بارش ہونے سے موسم خوشگوار ہونے کے ساتھ سردی میں بھی اضافہ ہوگیا ہے.بارش برسانے والے سسٹم کے بلوچستان میں داخل ہونے کے ساتھ شیلاباغ، کوژک ٹاپ اور کوہ خواجہ عمران میں ژالہ باری شروع ہوگئی اور مٹی کا طوفان تھم گیا‘بارش برسانے والے سسٹم سے پاک ایران اور پاک افغان سرحدی علاقوں میں بھی بارش اور ژالہ باری شروع ہوگئی ہے.

(جاری ہے)

خیال رہے کہ جنوری میں ہونے والی طوفانی برفباری اور بارش سے پورے ملک میں 105 افراد جاں بحق اور 96 زخمی ہوگئے تھے‘پاکستان میں قدرتی آفات سے نمٹنے والے ادارے نیشنل ڈیزاسٹر مینیجمنٹ اتھارٹی (این ڈی ایم اے ) کی جانب سے وزیراعظم عمران خان کو بھیجی جانے والی تازہ رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ بلوچستان میں آنے والے شدید برفانی طوفان اور بارش کے سبب 20 افراد اپنی جانوں کی بازی ہار گئے تھے.این ڈی ایم اے نے اپنی رپورٹ میں وزیراعظم کو بتایا تھا کہ قدرتی آفات، برفانی طوفان اور بارشوں کے سبب خیبرپختونخوا میں پانچ جب کہ آزاد کشمیر میں جاں بحق ہونے والوں کی تعداد 78 ہو چکی ہے.رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ برفانی طوفان کے نتیجے میں گلگت بلتستان میں دو افراد جاں بحق ہو چکے ہیں این ڈی ایم اے نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ 1295 مکانات کو بھی برفباری سے شدید نقصان پہنچا ہے.وزیراعظم کو دی جانے والی رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ برفانی طوفان اور سخت بارشوں کے سبب کے پی، بلوچستان، گلگت بلتستان اور آزاد کشمیر میں رابطہ سڑکیں بھی متاثر ہوئی ہیں.