کشمیر آرفن ریلیف ٹرسٹ لائن آف کنٹرول پر بھارتی قابض فوج کی جارحیت کا شکار لوگوں کو تنہا نہیں چھوڑے گا، چوہدری محمد اختر

بھارتی قابض فو ج کی فائرنگ سے لاِئن آف کنٹرول پر بسنے والے متاثرین کی بحالی و آباد کاری میں کروٹ تمام وسائل بروئے کار لائے گا، خطاب

جمعہ نومبر 20:50

مظفرآباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 20 نومبر2020ء) کشمیر آرفن ریلیف ٹرسٹ لائن آف کنٹرول پر بھارتی قابض فوج کی جارحیت کا شکار لوگوں کو تنہا نہیں چھوڑے گا، بھارتی قابض فو ج کی فائرنگ سے لاِئن آف کنٹرول پر بسنے والے متاثرین کی بحالی و آباد کاری میں کروٹ تمام وسائل بروئے کار لائے گا۔ ان خیالات کا اظہار تمغہ امتیاز پاکستان اور کروٹ کے چیرمین چوہدری محمد اختر نے اپنے اعزاز میں جموں و کشمیر سالویشن مومنٹ کی طرف سے دے گے استقبالیہ سے خطاب کرتے ہو ئے کیا۔

چوہدری اختر نے کہا کہ کروٹ نے دو ہزار پانچ کے زلزلے کے بعد آزاد کشمیر میں خدمت کا سفر شروع کیا ہے اور اس کا رخیر کو مخیرحضرات کے تعاون سے آگے بھی جاری رکھیں گے۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ ہفتے ایل او سی پر نہتے شہریوں کی شہادت اور ان کے گھروں کی تباہی کا سن کر راتوں کی نیند اڑ گی تھی۔

(جاری ہے)

لیکن کروٹ نے اپنی روایات اور خدمت کے جزبے کے تحت آن لائن اپیل کی اور صرف چھتیس گھنٹوں میں ہمیں یہ اپیل بند کرنا پڑی کیوں کہ ایل او سی متاثرین کی بحالی کے لئے جتنے پیسے ہمیں چاہے تھے وہ ہمیں مل گے۔

یہ اس بات کا ثبوت ہے کہ عوام کروٹ پر کتنا بھروسہ کرتی ہے۔ چوہدری اختر نے کہا کہ ایل او سی پر فائرنگ سے ہر متاثرہ شہری کو گھر کی تعمیر کے لئے ڈھائی لاکھ روپے نقد، فی کنبہ پچیس جستی چادریں اور راشن مہیا کیا جاے گا۔ فائرنگ سے متاثرہ ہسپتال ، سکول اور مساجد کو دوبارہ سے کروٹ خود تعمیر کرئے گی۔ چوہدری اختر نے کہا کہ مسلسل سفر کے باعث وہ گزشتہ چالیس گھنٹے سے نہیں سو ئے اور بر طانیہ سے سیدھا اسلام آباد اور وہاں سے مظفرآباد پہنچ گے تاکہ ایل او سی پر متاثرہ خاندانوں کی مدد کی جا سکے۔

استقبالیہ تقریب سے جموں و کشمیر سالویشن مومنٹ کے چیرمین الطاف احمد بٹ نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کروٹ بے سہارہ اور یتیموں کا سائبان ہے۔ دو ہزار پانچ کا زلزلہ ہو یا 2010 کا سیلاب ، میر پور کا زلزلہ ہو یا ایل او سی پر نہتے شہریوں پر بھارتی قابض افواج کی فائرنگ ، کروٹ نے ہر وقت اپنے آپ کو متاثرین کی خدمت کے لئے آگے کیا۔ الطاف بٹ نے کہا کہ چوہدری اختر بر طانیہ سے آزاد کشمیر کے لوگوں کی مدد کے لئے آتیہیں۔

اس پر ہمیں ان کو داد دینی چاہے۔ جو کام حکومت کے کرنے کے تھے وہ چوہدری اختر کر رہے ہیں۔ پاکستان نے کشمیر کے اس عظیم سپوت کو تمغہ امتیاز سے نوازا جو ہم سب کے لئے باعث مسرت ہے اور ہم کروٹ اور اس کے ذمہ داران کو یقین دلانا چاہتے ہیں کہ ہم ان کے ساتھ ہر حوالے سے تعاون جاری رکھیں گے کیونکہ ان کا مشن ایک عظیم اور متبرک ہے۔ الطاف بٹ نے کہا کہ اس وقت چوہدر ی اختر جیسے فرشتہ صفت انسانوں کی مدد ہم سب کی ذمہ داری ہے کیوں کہ وہ پاکستان اور آزاد کشمیر میں خدمت کا ایسا کام کر رہے ہیں جو ہم سب کے لئے باعث فخر ہے۔

تقریب سے ایڈیشنل چیف سیکریٹری جنرل اور چیرمین سی بی آر آزاد کشمیر فرحت علی میر نے کہا کہ استقبالیہ تقریب اس بات کا ثبوت ہے کہ چوہدری اختر ایک عظیم کام کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ الطاف احمد بٹ نے بھی کروٹ کے ساتھ جس محبت کا اظہار کیا وہ ہم سب کے لئے قابل قدر یے۔ رکن قانون ساز اسمبلی اور تحریک انصاف کے سکریٹری جنرل عبد الماجد خان نیکہا کہ کروٹ کی خدمات اہل کشمیر کے لئے باعث افتخار ہیں اور ہم چو ہدری اختر کو یقین دلاتے ہیں کہ تحریک انصاف ہر حوالے سے ان کی مدد جاری رکھے گی، شفیق بٹ نے کہا کہ کروٹ اب آزاد کشمیر میں بے سہارا اور بے کس لوگوں کی آواز بن کر نہ صرف ان کی خدمت کرئے گی بلکہ ان کی ہر حوالے سے مدد بھی کرئے گی۔

سینئر صحافی اور پریس فاونڈیشن کے وائس چیر مین سردار ذو الفقار نے کہا کہ الطاف بٹ او چوہدری اختر جس مشن کو لیکر آگے بڑھ رہے ہیں وہ ایک پیغمبرانہ مشن ہے۔ آزاد کشمیر کا ہر شہری کروٹ کے فلاحی کاموں میں ان کا بھر پور ساتھ دے گا۔ تقریب میں ڈاکٹر ریاض، جاوید احمد کار ، تنویر الاسلام، سینئر صحافی دلپزیر عباسی، اسلم میر، سرفراز میر، سردار نعیم چغتائی، اقبال میر، نصیر چوہدری، عدیل احمد خان، عبد الواجد خان، تقی الحسن، نوید اعوان، نصیر انور، شفیع ڈار، امتیاز عباسی، حامد جمیل ، خالد ثانی، محمد علی، حنیف بڈ گامی او ر دیگر نے بھی شرکت کی۔