خلیجی تعاون کونسل وزراء خارجہ کا ایٹمی مذاکرات کے حوالے سے اہم اجلاس اختتام پذیر

اعلامیے میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ جی سی سی ممالک کو ویانا ایٹمی مذاکرات میں شامل کیا جائے سعودی دارالحکومت ریاض میں منعقد ہونے والے خلیج تعاون کونسل کے وزراء خارجہ کے اجلاس کی صدارت بحرین کے وزیر خارجہ ڈاکٹر عبداللطیف الزیانی نے کی

irfan khatana عرفان کھٹانہ جمعہ 18 جون 2021 13:04

خلیجی تعاون کونسل وزراء خارجہ کا  ایٹمی مذاکرات کے حوالے سے اہم اجلاس ..
ریاض (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 جون2021ء) اعلامیے میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ جی سی سی ممالک کو ویانا ایٹمی مذاکرات میں شامل کیا جائے سعودی دارالحکومت ریاض میں منعقد ہونے والے خلیج تعاون کونسل کے وزراء خارجہ کے اجلاس کی صدارت بحرین کے وزیر خارجہ ڈاکٹر عبداللطیف الزیانی نے کی جبکہ سیکریٹری جنرل نایف الحجرف بھی اجلاس میں شریک ہوئے۔ سعودی عرب، کویت، امارات، قطر، عمان اور بحرین کے وزرائے خارجہ اجلاس میں شامل تھے۔

 اعلامیے میں یہ بھی کہا گیا کہ ایران کے ساتھ ایٹمی معاہدے میں اس کا بیلسٹک میزائل پرواگرام بھی زیرغور لانا چاہیے۔خلیجی تعاون کونسل نے حوثیوں کو ایران کی طرف سے مسلسل اسلحہ سمگل کرنے کی مذمت کی جبکہ حوثیوں سے یمن میں جنگ بندی سے متعلق سعودی اقدام قبول کرنے کی اپیل بھی کی ہے۔

(جاری ہے)

جی سی سی کے وزرائے خارجہ نے مارب پر حوثیوں کے مسلسل حملوں کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ’عرب ممالک کے اندرونی امور میں کسی بھی غیر ملکی طاقت کی مداخلت ناقابل قبول ہے اعلامیے میں کہا گیا کہ دریائے نیل کے پانی میں مصر اور سوڈان کے آبی حقوق کو  نقصان پہنچانے کے ہر اقدام کو مسترد کرتے ہیں خلیجی تعاون کونسل نے عالمی ادارہ محنت کا رکن منتخب کیے جانے پر سعودی عرب اور سلامتی کونسل کا رکن منتخب کیے جانے پر متحدہ عرب امارات کو مبارکباد دی