ٹیکس اور واجبات کی ادائیگیوں پر وفاق اور سندھ حکومت آمنے سامنے آگئے

وزیراعظم کی مداخلت کے بعد ایف بی آر نے سندھ حکومت کے 12 میں سے 5 اکائونٹس بحال کر دیئے ایسا کوئی قدم نہ اٹھایا جائے جس سے اداروں میں تصادم ہو،وزیراعظم کی ایف بی آر چیئرمین کو ہدایت

ہفتہ اپریل 23:36

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبار آن لائن۔ ہفتہ اپریل ء)ٹیکس اور واجبات کی ادائیگیوں پر وفاق اور سندھ حکومت آمنے سامنے آ گئے ، ایف بی آر نے سندھ حکومت کے مختلف محکموں کے اکائونٹس منجمد کئے تو ایکسائز پولیس ، ایف بی آر کا دفتر سیل کرنے پہنچ گئی، وزیراعظم کی مداخلت کے بعد ایف بی آر نے سندھ حکومت کے 5 اکائونٹس بحال کر دیئے۔

تفصیلات کے مطابق ایف بی آر نے سندھ حکومت کے 12 محکموں کے اکائونٹس منجمد کئے تو سندھ حکومت کے محکمہ ایکسائز بھی حرکت میں آ گیا ، محکمہ ایکسائز کا عملہ 40 سال سے واجب الادا رقم وصول کرنے کے ایف بی آر کے دفتر پہنچ گیا ، ایکسائز حکام کاکہنا تھا کہ اگر 5 ارب روپے کے واجبات ادا نہ کئے گئے تو دفتر سیل کر دیا جائے گا۔دونوں اداروں کے درمیان تنازع زیادہ بڑھا تو وزیراعظم کو بھی مداخلت کرنی پڑی، وزیراعظم نے چیئرمین ایف بی آر کو فون کر کے فوری طور سندھ حکومت کے اکائونٹس بحال کرنے کی ہدایت کی۔

(جاری ہے)

وزیراعظم نے کہاکہ ایسا کوئی قدم نہ اٹھایا جائے جس سے اداروں میں تصادم ہو،وزیراعظم کی ہدایت پر ایف بی آر نے سندھ حکومت کے 12 میں سے 5 اکائونٹس بحال کر دیئے۔دوسری جانب ایکسائز پولیس کا کہنا ہے ایف بی آر حکام واجبات کی ادائیگی کی تحریری یقین دہانی کرائیں ، جب تک تحریری یقین دہانی نہیں کرائی جاتی ، ایف بی آر کے دفتر سے نہیں جائیں گے۔

Your Thoughts and Comments