ہزار نرسوں کی قلت کا سامنا ہے، برطانوی محکمہ صحت

لندن (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 دسمبر2018ء) برطانوی محکمہ صحت کا کہناہے کہ اسے تقریباً42 ہزار نرسوں کی قلت کا سامنا ہے۔عالمی ذرائع ابلاغ کے مطابق برطانیہ میںمحکمہ صحت پر کئی برسوں سے تنقید کیرہی ہسپتالوں میں میڈیکل سٹاف، ڈاکٹروں اور میڈیکل عملے کمی رہتی ہے۔کئی ہسپتالوں میں ڈاکٹروں سے وقت حاصل کرنا مشکل ہوجاتا ہے اور کبھی عملہ دستیاب نہیں ہوتا۔

تمام مسائل کے موجود رہنے کے دوران اب تازہ ترین انکشاف یہ ہوا ہے کہ ملک میں نرسوں کی شدید قلت ہوگئی ہے۔

(جاری ہے)

باقاعدہ نرسنگ کرنے کیلئے عملہ بمشکل تیار ہوتا ہے اور یہ جگہ رضا کاروں کے ذریعے پوری کرنے کی کوشش کی جاتی ہے ۔ رضاکار خاطر خواہ تعداد میں ہسپتالوں اورمحکمہ صحت سے رجوع نہیں کررہے جس کا اثر ہسپتالوں کی کارکردگی اور مریضوں کی صحت پر پڑرہا ہے۔ اس وقت بھی نرسنگ کا جو تھوڑا بہت کام ہورہا ہے وہ بہت محدود ہے جبکہ خواتین کی نسبت مرد نرسنگ عملہ بہت ہی کم تعداد میں دستیاب ہوتا ہے۔ محکمہ صحت کے مطابق فوری طور پر 42 ہزار نرسوں کی اشد ضرورت ہے جسے پورا کرنے کے لئے حکمت عملہ تیار کی جا رہی ہے۔

Your Thoughts and Comments