گوجرانوالہ کے قبرستان میں گورکن کی دس سالہ بچے سے زیادتی

حفیظ گورکن قبرستان میں بنے ایک کوارٹر میں رہائش پذیر تھا جو فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا۔ پولیس

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین جمعرات 23 ستمبر 2021 13:29

گوجرانوالہ کے قبرستان میں گورکن کی دس سالہ بچے سے زیادتی
گوجرانوالہ (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 23 ستمبر 2021ء) : گوجرانوالہ میں دس سالہ بچے سے زیادتی کا ایک افسوسناک واقعہ پیش آیا۔ تفصیلات کے مطابق گوجرانوالہ کے قبرستان میں گورکن نے دس سالہ بچے کو زیادتی کا نشانہ بنایا۔ واقعہ تھانہ دھلے کے علاقہ شاہین آباد کے قبرستان میں پیش آیا، حفیظ نامی گورکن کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا جبکہ ملزم فرار ہو گیا۔

پولیس کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا کہ ملزم حفیظ گورکن ہے اور قبرستان میں بنے ایک کوارٹر میں رہائش پذیر ہے۔متاثرہ بچہ گلی میں کھیل رہا تھا ملزم ورغلا کر ساتھ لے گیا ۔ ملزم نے اپنے کوارٹر میں لے جا کر زیادتی کی اور فرار ہو گیا ۔متاثرہ بچے کا میڈیکل بھی کروایا جارہا ہے ۔ جس کے بعد ملزم کی تلاش شروع کر دی جائے گی۔

(جاری ہے)

اس سے قبل سٹی پولیس آفیسر سرفراز احمد فلکی نے گوجرانوالہ کے علاقہ تھانہ دھلے میں دس سالہ طالبعلم پر بہیمانہ تشدد کے واقعہ کا فوری نوٹس لیا تھا۔

پولیس کے مطابق حسنین مسجد نور مدینہ میں قرآن پاک کی تعلیم حاصل کرنے جاتا تھا۔ مسجد تاخیر سے پہنچنے پر ملزم ثاقب نے ڈنڈوں سے کمر اور ٹانگوں پر تشدد کیا۔ تھانہ دھلے پولیس نے فوری کاروائی کی اور 10سالہ بچے پر تشدد کرنے والے قاری ثاقب کو گرفتار کرلیا۔ پولیس حکام کے مطابق ہر صورت انصاف اور میرٹ کو ملحوظ خاطر رکھا جائے گا۔ واضح رہے کہ بچوں سے زیادتی کے واقعات میں گذشتہ کچھ ماہ سے ہوشربا اضافہ ہوا ہے جس نے والدین کو بھی تشویش میں مبتلا کر دیا ہے۔

آئے روز بچوں اور کم سن بچیوں پر تشدد اور ان سے جنسی زیادتی کے واقعات رپورٹ ہوتے ہیں۔ تین روز قبل چنیوٹ میں 17ملزمان نے 10 سالہ بچے کو زیادتی کا نشانہ بنایا تھا۔ بھوانہ کے نواحی چاہ کلر والا میں دس سالہ یتیم بچے سے مبینہ اجتماعی جنسی زیادتی کی گئی۔ جس کے بعد سترہ افراد پر مشتمل جنسی درندہ گروہ کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا ۔ باسط نواز کے والد کا دو سال قبل انتقال ہو چکا ہے۔

وہ اپنے ماموں محمد شفیع کے زیر کفالت ہے۔ 19 ستمبر کی شام تقریباً سات بجے احتشام، آ غا خان اور محمد فاروق اسے گھر سے بلا کر باہر ایک موٹر پر لے گئے اور اجتماعی بد فعلی کر کے اپنی درندگی کی پیاس بجھائی۔ رپورٹ کے مطابق کافی دنوں سے سترہ درندہ صفت جنسی گروہ، مزکورہ یتیم بچے کو بلیک میل کر کے مختلف اوقات میں بدفعلی کرتے رہے ہیں، متاثرہ بچے کے ماموں محمد شفیع کی مدعیت میں تھانہ بھوانہ پولیس نے مقدمہ درج کر لی۔

متعلقہ عنوان :

گجرانوالہ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments