نوازشریف کو فوج سیاست میں لیکر آئی تھی تو عمران خان بتائیں انہیں کون لارہا ہے‘رانا ثناء اللہ

سندھ میں زرداری صاحب اینٹ سے اینٹ بجانے چلے تھے اب نیب کی مہربانی سے اینٹ سے اینٹ جوڑرہے ہیں چیئرمین نیب سے گزارش کروں گا 2018ء کے انتخابات میں نیب کے کردارکوشفاف بنانے میں کامیاب نہ ہوئے تویہ المیہ ہوگا‘میڈیا سے گفتگو

جمعہ مئی 21:40

نوازشریف کو فوج سیاست میں لیکر آئی تھی تو عمران خان بتائیں انہیں کون ..
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 04 مئی2018ء) صوبائی وزیر قانون و پارلیمانی امور رانا ثنااللہ خاں نے کہا ہے کہ عمران خان نے کہا کہ نوازشریف کو فوج سیاست میں لیکر آئی تھی تو وہ بتائیں کہ انہیں کون سیاست میں لارہا ہے،،سندھ میں زرداری صاحب اینٹ سے اینٹ بجانے چلے تھے اب نیب کی مہربانی سے اینٹ سے اینٹ جوڑرہے ہیں،،چیئرمین نیب سے گزارش کروں گا کہ 2018ء کے انتخابات میں نیب کے کردارکوشفاف بنانے میں کامیاب نہ ہوئے تویہ المیہ ہوگا۔

پنجاب اسمبلی کے احاطہ میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے رانا ثنا اللہ نے کہا کہ پوری قوم آج بھی نیب کے کردار کو پوری طرح سے فوکس کرتی ہے اور شک کی نظر سے دیکھتی ہے، زرداری صاحب جو اینٹ سے اینٹ بجانے چلے تھے، کس طرح نیب کی مہربانیوں کے حق دار ٹھہرے، سندھ میں کئی وزراء پر نیب کی تحقیقات کے تمام کیسز ختم کر دیئے گئے۔

(جاری ہے)

کہا جارہا ہے کہ مظفر ٹپی بھی دیانتدار دار شفاف ڈکلیئر ہو گئے ہیں، پیرمظہرالحق کے خلاف اساتذہ بھرتی کروانے کا کیس تھا، انہیں بھی صادق اورامین کا سرٹیفکیٹ مل گیا ہے جب کہ فریال تالپور پر بھی کسی سے کچھ لینے کا الزام ثابت نہیں ہوسکا۔

انہوں نے کہا کہ 2013ء کے انتخابات کی کہانی پوری قوم جانتی ہے جبکہ 2002ء کے انتخابات کے حوالے سے نیب کا کردار سب پر واضح ہے، چیئر مین نیب سے گزارش کروں گا کہ 2018ء کے الیکشن میں نیب کے کردار کو شفاف بنانے میں کامیاب نہ ہوئے تویہ المیہ ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان نے کہا کہ نوازشریف کو فوج سیاست میں لیکر آئی تھی تو وہ بتائیں کہ انہیں کون سیاست میں لارہا ہے، فوج کا یہ کردار نہیں کہ کسی کو آگے لائے اور کسی کو پیچھے کرے۔ایس ایس پی جونیجو تشدد کیس میں چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کے بری ہونے پر وزیر قانون پنجاب نے کہا کہ کہا یہ سب کے بری ہونے کا موسم ہے اور عمران خان ان سب کے سرغنہ ہیں۔