پی ٹی آئی کی حکومت کاہر آنے والادن قوم کے لیے مشکلات کا باعث بن رہا ہے ‘امیر العظیم

حکومت بجلی وگیس کی مستقل فراہمی کے لیے اپنی تمام ترصلاحیتیں بروئے کارلائے‘امیرجماعت اسلامی صوبہ وسطی پنجاب

جمعرات دسمبر 17:13

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 13 دسمبر2018ء) امیرجماعت اسلامی صوبہ وسطی پنجاب امیر العظیم نے کہا ہے کہ سردی کی آمد کے ساتھ ہی گیس کی قلت سے پنجاب سمیت ملک بھر میں عوام کی مشکلات میں کئی گنا اضافہ ہوگیا ہے، گھروںکے چولھے ٹھنڈے ہونے سے لوگوں کی زندگی اجیرن ہوچکی ہے، ہر سال موسم سرما کی آمد سے قبل حکمرانوں کی جانب سے بلند وبانگ دعوے کیے جاتے ہیں کہ گیس کی لوڈ شیڈنگ نہیںکی جائے گی مگر ہر بار صورت حال مختلف ہوتی ہے ،موجودہ دور حکومت میں بھی بہتری کی بجائے دن بدن خرابی ہی نظر آرہی ہے۔

ان خیالات کا اظہارانہوں نے گزشتہ روزعوامی وفود سے گفتگواور سیالکوٹ میں مختلف پروگرامات سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ امیر العظیم نے کہا کہ وطن عزیز میں وسائل کی کوئی کمی نہیں۔

(جاری ہے)

پاکستان تیل، گیس، کوئلہ اور معدنیاتی وسائل سے مالا مال ملک ہے، اس کے باوجودتحریک انصاف کی نئی حکومت اب تک ملکی مشکلات پر قابو پانے میں ناکام دکھا ئی دے رہی ہے۔

ہوناتویہ چاہئے تھا کہ مسلم لیگ(ن)کے گزشتہ دور حکومت کی نسبت موجودہ دورمیں عوام کو حقیقی معنوں میں ریلیف ملتا۔بجلی،گیس کی قیمتوں اورمہنگائی میں کمی ہوتی لیکن عوامی توقعات کے مطابق ایسانہیں ہوسکا۔ابھی موجودہ حکمرانوں کے چار ماہ ہی گزرے ہیں اورعوام کاجینا دوبھر ہوگیا ہے۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ قومی وسائل سے بھر پور انداز میں استفادہ کرنے کے لیے مشترکہ حکمت عملی وضع کی جائے ۔

انھوں نے کہا کہ گیس کی لوڈشیڈنگ کے حوالے سے حکومت کی جانب سے ابھی تک سنجیدگی کا مظاہرہ نہیں کیا جارہا۔ وزیر اعظم کی طرف سے ایم ڈیز سوئی سدرن اور نادرن کے خلاف کارروائی اوربورڈ آف ڈائریکٹرزکوتبدیل کرنے کا حکم محض عوامی دبائو کے اثر کوزائل کرنے کی ناکام کوشش ہے۔ اصل حقائق سے قوم کو آگاہ کیا جاناچاہئے۔ملک میں تبدیلی کے نام پر بننے والی حکومت عوام کی فلاح و بہبود کے لیے کچھ نہیں کررہی۔

انہوں نے کہاکہ گیس کی بدستور قلت کے باعث ایل پی جی کی قیمتوںمیں 27روپے فی کلو تک کے اضافے کو مسترد کرتے ہیں۔ اگر حکمران عوام کو خوشیاں نہیں دے سکتے تو ان کو دکھ دینے کا اختیار بھی نہیں ہے۔ جب سے ملک میں پی ٹی آئی کی حکومت آئی ہے قوم کے لیے ہر آنے والادن مشکلات کا باعث بن رہا ہے ۔ حکمرانوں کی حکمت عملی اوروژن کہیںنظر نہیںآرہا۔یوں محسوس ہوتاہے کہ جیسے ڈنگ ٹپائوانداز میں ملک چلایاجارہاہے۔امیر العظیم نے مزیدکہاکہ موجودہ بجلی وگیس بحران کی وجہ سے ملکی معیشت کا پہیہ جام اور کاروبار ٹھپ ہوگئے ہیں۔ مزدوروں کے گھروں میں نوبت فاقوں تک پہنچ چکی ہے۔ حکومت کوبجلی وگیس کی مستقل فراہمی کے لیے اپنی تمام ترصلاحیتوں کو بروئے کار لانا چاہئے۔