ملائشیا کی قیادت نے تمام تر بھارتی دبائوکے باوجود جھکنے سے انکار کرکے کشمیری عوام کے دل جیت لئے ہیں،سر دار مسعود خان

بھارت مقبوضہ کشمیر میں انسانیت سوز مظالم ڈہا رہا ہے،بھارتی حکومت مالی منفعت کا لالچ دیکر نوجوانوں کو تحریک آزادی سے برگشتہ کرنے کی کوشش کر رہی ہے جس میں وہ کبھی کامیاب نہیں ہو گی،صدر آزاد کشمیر کی ملائشیا کی یوتھ موومنٹ کے سرپرست اعلیٰ اور ملائشیا کے وزیر مملکت برائے صنعت ، تجارت کے ساتھ ملاقات کے دوران گفتگو

بدھ فروری 17:17

ملائشیا کی قیادت نے تمام تر بھارتی دبائوکے باوجود جھکنے سے انکار کرکے ..
کوالالمپور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 12 فروری2020ء) آزاد جموں و کشمیر کے صدر سردار مسعود خان نے ملائشیا کے مسئلہ کشمیر کے حوالے سے اصولی موقف کو سراہتے ہوئے کہا کہ ملائشیا کی قیادت نے تمام تر بھارتی دبائوکے باوجود جھکنے سے انکار کرکے کشمیری عوام کے دل جیت لئے ہیں ۔ یہ بات انہوں نے ملائشیا کی یوتھ موومنٹ کے سرپرست اعلیٰ اور ملائشیا کے وزیر مملکت برائے صنعت ، تجارت و سرمایہ کار ی محمد رفیق فائزہ محی الدین کے ساتھ ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہی۔

ملاقات میں ملائشیا کشمیر یوتھ موومنٹ کے صدر سہیل محمد قمرالدین بھی موجود تھے۔ صدر آزادکشمیر نے کہا کہ ملائشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد ان قد آور عالمی رہنماوں میں سے ایک ہیں جنہوں نے جموں و کشمیر کے مسئلہ پر مضبوط اور اصولی موقف اختیار کیا جس کو جموں و کشمیر کے عوام تحسین کی نظر سے دیکھتے ہیں وزیراعظم مہاتیر محمد کے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے خطاب کا حوالہ دیتے ہوئے صدر سردار مسعود خان نے کہا کہ ملائشیا کے وزیراعظم نے واضح اور دو ٹوک انداز میں مقبوضہ جموں وکشمیر کے حوالے سے بھارتی اقدامات کی نہ صرف مذمت کی بلکہ اسے کھلی جارحیت قرار دیا۔

(جاری ہے)

صدر نے ملائشین رابطہ کونسل برائے اسلامک آرگنائزیشن(ایم اے پی آئی ایم)کا بھی شکریہ ادا کیا جو جموں وکشمیر کے عوام اور ملائشیا کے عوام کے درمیان پل کا کردار ادا کر رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ملائشیا اور پاکستان کے مابین انتہائی قریبی اور برادرانہ تعلقات ہیں اور اس توقع کا اظہار کیا کہ ان کے اس دورے سے دونوں ممالک کے عوام کے درمیان تعلقات میں مزید وسعت اور ہمہ گیری پیدا ہو گی ۔

انہوں نے کہا کہ ملائشین کشمیر یوتھ موومنٹ ایک معروف تنظیم ہے جو ایڈوکیسی کے ذریعے ملائشین نوجوانوں کو مسئلہ کشمیر اجاگر کرنے کی کوششوں سے جوڑ رہی ہے اور نوجوانوں کو جموں وکشمیر میں انسانی بحران میں اپنا کردار ادا کرنے کے لئے تیار کر رہی ہے ۔ مقبوضہ جموں وکشمیر کی صورتحال سے ملائشین رہنمائوں کو آگاہ کرتے ہوئے صدر آزادکشمیر نے کہا کہ بھارت مقبوضہ جموں وکشمیر میں انسانیت سوز مظالم ڈہا رہا ہے ۔

گذشتہ سال پانچ اگست کے بعد بھارتی فوج نے نہ صرف مقبوضہ ریاست کو محاصرے میں لے رکھا ہے بلکہ ہزاروں نوجوانوں کو گرفتار کر کے انھیں جیلوں اورعقوبت خانوں میں ڈال دیا گیا ہے جہاں انہیں بدترین مظالم کا نشانہ بنایا جا رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کشمیری نوجوانوں کو جن نظر بندی کیمپوں میں محبوس کیا گیا ہے انہیں بھارتی حکومت ڈی ریڈیکلائزیشن کیمپ کا نام دے رہی ہے ۔ اس کے ساتھ ساتھ بھارتی حکومت مالی منفعت کا لالچ دیکر نوجوانوں کو تحریک آزادی سے برگشتہ کرنے کی کوشش کر رہی ہے جس میں وہ کبھی کامیاب نہیں ہو گی۔