Live Updates

ڈالر کی قیمت میں پھر بڑا اضافہ

انٹر بینک میں ڈالر 163 روپے 59 پیسے کا ہو گیا

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان جمعرات مارچ 11:08

ڈالر کی قیمت میں پھر بڑا اضافہ
کراچی (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔26 مارچ 2020ء) ڈالر کی قیمت کو ایک بار پھر پر لگ گئے ہیں۔گزشتہ دو تین روز سے ڈالر کی قیمت میں مسلسل اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے ۔کاروباری ہفتے کے چوتھے روز انٹر بینک میں ڈالر کی قیمت میں ایک روپے 60 پیسے کا اضافہ ہوا۔کرنسی ڈیلرز کے مطابق انٹر بینک میں ڈالر کی قیمت 163 روپے 59 پیسے پر ٹریڈ کر رہی ہے.گذشتہ روز انٹر بینک میں ڈالر کی قیمت میں 3 روپے کا اضافہ ہوا تھا جس کے بعد ڈالر کی قیمت 162 روپے ہوگی۔

ڈالر نے ایک بار پھر روپے کو پٹخ دیا ہے۔۔کورونا کی وجہ سے جہاں اب تک ہزاروں اموات ہو چکی ہیں وہیں مہنگائی میں بھی اضافہ ہوا ہے۔اور اب پاکستان میں ڈالر بھی اپنی بلند ترین سطح پر پہنچ گیا ہے۔آج ڈالر 163 روپے 59 پیسے کا ہو گیا ہے۔گذشتہ روز پاکستان سٹاک ایکسچینج میں بھی شدید مندی ریکارڈ کی گئی تھی جس کے بعد کاروبار روک دیا گیا تھا۔

(جاری ہے)

100 انڈیکس میں 1300سے زائد پوائنٹس کی کمی ریکارڈ کی گئی جس سے انڈیکس 27000 225 پوائنٹس کی سطح تک گر گیا۔

۔گزشتہ سال کے آغاز میں ڈالر کی قیمت مسلسل بڑھتی رہی، جنوری میں ڈالر 158 روپے 93 پیسے ہوا تھا۔واضح رہے کہ جب سے پی ٹی آئی حکومت اقتدار میں آئی ہے ڈالر کی قیمت میں اضافہ ہی دیکھنے میں آیاہے۔ گزشتہ سال سے ڈالر کی قیمت میں مسلسل اضافہ دیکھنے میں آرہاہے۔ گزشتہ سال ڈالر کی قیمت میں حیران کن اضافہ دیکھنے میں آیا جب کہ ڈالر اپریل میں ایک دم سے141 روپے سے150 پر چلا گیا۔

پاکستان کی تاریخ میں ڈالر کی سب سے زیادہ قیمت بھی گزشتہ سال میں لگی جس میں مئی میں ڈالر اپنی بلند ترین سطح پر چلا گیا۔ ڈالر151 روپے میں فروخت ہوا جبکہ جون میں ڈالر نے پاکستانی تاریخ کی سب سے زیادہ قیمت 164 تک بھی چھلانگ ماری۔یہ قیمت پاکستان کی تاریخ کی بلند ترین قیمت ہے۔گزشتہ سال جولائی میں ڈالر نے اڑان کم کی اور ڈالر160روپے کی قیمت پر آگیا۔یاد رہے کہ گزشتہ سال اگست میں روپے نے ڈالر کا جم کر مقابلہ کیا اور اگست میں ڈالر 157 میں فروخت ہوا جب کہ ستمبر میں ڈالر156 روپے میں فروخت ہوا۔
کرونا وائرس کی تباہ کاریاں سے متعلق تازہ ترین معلومات