ہرگزرتے دن کے ساتھ افغانستان میں انسانی المیہ بڑھ رہا ہے، چوہدری فواد حسین

ہماری کوشش ہے کہ سعودی عرب سمیت دیگر برادر ممالک کے ساتھ مل کر ایسا میکنزم تشکیل دیا جائے جس سے افغانستان کے لوگوں کی مدد کی جا سکے، تقریب سے خطاب

بدھ 8 دسمبر 2021 22:42

ہرگزرتے دن کے ساتھ افغانستان میں انسانی المیہ بڑھ رہا ہے، چوہدری فواد ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 08 دسمبر2021ء) وفاقی وزیر اطلاعات چوہدری فواد حسین نے کہا ہے کہ ہر گذرتے دن کے ساتھ افغانستان میں انسانی المیہ بڑھ رہا ہے۔ سرد موسم میں افغانستان کے لوگ بدترین انسانی بحران سے دوچار ہیں۔ سعودی سفارت خانہ کے زیر اہتمام منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوے چوہدری فواد حسین نے کہا 19 دسمبر کو او آئی سی وزراء خارجہ کانفرنس میں افغانستان کے اندر انسانی المیہ کی صورتحال پر توجہ مرکوز کی جائے گی۔

انہوں نے کہا ہماری کوشش ہے کہ سعودی عرب سمیت دیگر برادر ممالک کے ساتھ مل کر ایسا میکنزم تشکیل دیا جائے جس سے افغانستان کے لوگوں کی مدد کی جا سکے۔ انہوں نے کہا پاکستان افغانستان کی ہر ممکن مدد کر رہا ہے، ہم دو لاکھ 50 ہزار میٹرک ٹن گندم افغانستان کو فراہم کر رہے ہیں۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا پاکستان نے افغانستان سے درآمد کی جانے والی 40 اشیائ پر ڈیوٹی ختم کی ہے، اس اقدام سے افغانستان کے کاروباری افراد کو اپنے پاوں پر کھڑا ہونے میں مدد ملے گی۔

انہوں نے کہا او آئی سی وزرائے خارجہ اجلاس بنیادی طور پر غیر سیاسی اجلاس ہوگا جس میں صرف افغانستان کی انسانی ہمدردی کی بنیادوں پر مدد پر توجہ مرکوز کی جائے گی۔ انہوں نے کہا ہماری خواہش ہے کہ دنیا افغانستان کی مدد کے لئے مل بیٹھے، افغانستان میں پیدا ہونے والا بحران شدت اختیار کر سکتا ہے۔ انہوں نے کہا ’’دی اکانومسٹ‘‘ نے گزشتہ ماہ اپنی رپورٹ میں افغانستان کے اندر انسانی المیہ کا ذکر کیا جو یمن، شام اور عراق سے بڑا ہو سکتا ہے۔

ایسی صورتحال میں ہمیں افغانستان کے عوام کی مدد پر توجہ دینی چاہئے۔ انہوں نے کہا ہم سیاست پر بعد میں بھی بات کر سکتے ہیں لیکن افغانستان میں پیدا ہونے والے انسانی المیہ پر بات کرنے میں تاخیر نہیں کر سکتے۔ انہوں نے کہا وزیراعظم عمران خان نے ہمیشہ افغانستان میں امن کی بات کی ہے، ہماری حکومت افغانستان میں امن کے لئے کوشاں ہے۔ انہوں نے کہا او آئی سی وزرائے خارجہ کانفرنس 1980ء کے بعد پاکستان کا سب سے بڑا خارجہ امور کا ایونٹ ہوگا۔

انہوں نے کہا او آئی سی وزرائ خارجہ کانفرنس میں 27 ممالک کے وزرائے خارجہ شرکت کریں گے جبکہ 84 ممالک کی نمائندگی ہوگی۔ انہوں نے کہا سعودی عرب کے ساتھ ہمارے برادرانہ تعلقات قیام پاکستان سے پہلے کے قائم ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جب سعودی عرب کے شاہ عبدالعزیز 1946ء میں کراچی آئے تو آل انڈیا مسلم لیگ کی قیادت نے ان کا استقبال کیا جس میں مرحوم ایم اے ایچ اصفہانی بھی شامل تھے، چوہدری فواد حسین