اوگرا نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کیلئے سمری تیار کر لی

پٹرولیم مصنوعات چار سے پانچ روپے فی لٹر مہنگی ہونے کا امکان، قیمتوں میں اضافے سے متعلق حتمی فیصلہ وزیر اعظم کریں گے

muhammad ali محمد علی جمعہ 14 جنوری 2022 21:48

اوگرا نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کیلئے سمری تیار کر لی
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 جنوری2022ء) اوگرا نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کیلئے سمری تیار کر لی، پٹرولیم مصنوعات 4 سے 5 روپے فی لٹر مہنگی ہونے کا امکان، قیمتوں میں اضافے سے متعلق حتمی فیصلہ وزیر اعظم کریں گے۔ تفصیلات کے مطابق اوگرا نے 16 جنوری سے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کیلئے سمری منظوری کیلئے بھجوا دی۔

نجی ٹی وی چینل سٹی 42 نیوز کی رپورٹ کے مطابق اوگرا کی جانب سے پٹرولیم ڈویژن کو ارسال کی گئی سمری کے مطابق پٹرولیم مصنوعات 4 سے 5 روپے فی لٹر مہنگی ہونے کا امکان ہے۔ قیمتوں میں اضافے سے متعلق حتمی فیصلہ وزیر اعظم عمران خان کریں گے۔ دوسری جانب عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمت میں اضافے کے سبب پاکستان میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 6 روپے تک کے اضافے کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے۔

(جاری ہے)

آئل ریفائنریز کے اعداد و شمار کے مطابق عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمت میں ہونے والے حالیہ اضافے کے سبب پیٹرول اور ڈیزل کی ایکس ریفائنری قیمت بڑھنے کا خدشہ ہے۔ امریکی خام تیل 2 ڈالر اضافے سے 81 ڈالر فی بیرل جبکہ برطانوی خام تیل ایک ڈالر 70 سینٹ اضافے سے 83 ڈالر 70 سینٹ میں فروخت ہورہا ہے۔ عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمت میں ہونے والے اضافے کے پیش نظر مقامی مارکیٹ میں پیٹرول کی قیمت میں 5 روپے 25 پسے، ڈیزل کی قیمت میں 5 روپے 75 پیسے، مٹی کے تیل کی قیمت میں 5 روپے 50 پیسے اور لائٹ ڈیزل کی قیمت میں 6 روپے فی لیٹر اضافے کا امکان ہے۔

خیال رہے کہ سال نو کے موقع پر اوگرا کی جانب سے پیٹرول 3 روپے 2 پیسے فی لیٹر مہنگا کرنے کی سمری ارسال کی گئی تھی پیٹرولیم ڈویژن نے اوگرا کی جانب سے پیٹرول کی قیمت 3روپے 2 پیسے مہنگا کرنےکی سمری پر عمل کرنےکے بجائے فی لیٹر پیٹرول 4 روپے مہنگا کیا تھا۔