Aroo Khush Zaiqa Sehat Bakhsh - Article No. 1280

آڑو خوش ذائقہ صحت بخش - تحریر نمبر 1280

منگل 20 مارچ 2018

Aroo Khush Zaiqa Sehat Bakhsh - Article No. 1280

شہنیلی جلد کا حامل نہایت خوش رنگ ذائقہ رسیلا پھل آڑو یا Peach جسے پندرہویں صدی میں سکندر اعظم نے ملک چین سے روم اور یونان میں متعارف کروایا اسے لاطینی زبان میں Persicum malum یعنی فارسی سیب Persion apple اردو میں شفتا لو بھی کہا جاتا ہے۔
یہ ایک ایسا پھل ہے جس کا فائدہ بھی اتنا ہی زیادہ ہے جتنا اس کا عمدہ ذائقہ اس کی کئی قسمیں ہوتی ہیں لیکن اچھا آڑو وہ ہوتا ہے جس کی گٹھلی آسانی سے علیحدہ ہوجائے آڑو ایک مقبول عام پھل ہیں جسے امیر و غریب سب شوق سے کھاتے ہیں بازار میں ان کی تین قسمیں گول چپٹی اور لمبوتری ملتی ہیں۔


اقسام:آڑو شاذو نادر ہی اپنی اقسام کے لحاظ سے بکتا ہے لیکن ہاں اس کے گودے کا رنگ جو کبھی پیلا یا سفید ہوتا ہے لازمی طور پر اس کی خریداری پر اثر انداز ہوتا ہے کچھ لوگوں کا خیال ہے کہ سفید گودے والا آڑو ذائقے میں زیادہ مزیدار ہوتا ہے جبکہ کچھ لوگ پیلے گودے والا آڑو کھانا پسند کرتے ہیں گودے والی اقسام کے آڑو میں Elegant lady ‘Royal george ‘اورBellegrade وغیرہ شامل ہیں جبکہ Mirelle سفید گودے کے آڑو کی قسم ہے،
غذائی خصوصیات:آڑو ایک نہایت صحت بخش پھل ہے جس میں وٹامنز کی کئی اقسام پائی جاتی ہیں 100 گرام خشک آڑو میں 280 ملی گرام وٹامن A اس کے علاوہ وٹامن B اور C بھی باکثرت مقدار میں موجود ہوتا ہے 100 گرام آڑو تقریباً 60Kcal کیلوریز فراہم کرتا ہے۔

(جاری ہے)


آڑو وٹامن A,BاورC سے بھرپور ہے بدن کو غذا اور بیماریوں کے لیے شفائی اثرات رکھتا ہے اس میں گوشت بنانے والے شکری‘نشاستہ دار اور روغنی اجزاءتقریباً 10% اور پانی90% شامل ہے قدرت نے فولاد کیلشیم اور فاسفورس کے اجزاءبھی اس میں رکھے ہیں لُوکے موسم میں یہ نوجوان کو آرام جاں اور گرم طبیعت والوں کے لیے تسکین کا سامان ہے صالح خون پیدا کرتا ہے خون کی تیزابیت دور کرکے پھوڑے پھنسی اور جلدی امراض سے محفوظ رکھتا ہے شریانوں کی سختی دور کرکے ہائی بلڈ پریشر کو اعتدال پر لاتا ہے۔

اس میں شامل Nectarines اپنے قبض کشا اثرات کی وجہ سے جگر معدہ اور انتڑیوں کے زہریلے فضلات خارج کرتا ہے قدرت نے اس میں جراثیم کش اثرات بھی پیدا فرمائے ہیں ہفتہ دو ہفتے روزانہ آدھ پاﺅ سے آدھ سیر تک آڑو استعمال کرنے سے انتڑیوں کے چھوٹے بڑے کیڑے خارج ہوجاتے ہیں اور آئندہ پیدا نہیں ہونے پاتے دھوپ کی تیزی اور آندھیوں کے جھگڑ چلنے سے جب غذائی نالی میں سوزش ہوجائے تو اس کے استعمال سے درست ہوجاتی ہیں۔

معدے کی تیزابیت دور کرنے کے لیے اسے غذا سے پہلے کھانا چاہئے چھلکا سمیت کھانا زر ہضم اور عمدہ قبض کشا ہے آڑو بواسیر جوش خون کمزوری اور کمزوری پیدا کرنے والی رطوبتوں کے اخراج کو روکنے کے لیے دوا بھی ہیں اور غذا بھی چھوٹے بچوں کے سر اور کان کے پیچھے اکثر سخت خارش والی وبائی پھنسیاں آتی ہیں آڑو کے مغز کو ہرے دھنیے کے ساتھ رگڑ کر لیپ کرنے سے یہ پھنیساں دور ہوجاتی ہیں۔


خریداری اور حفاظت:آڑو اتنی جلدی خراب نہیں ہوتے اگر آپ کو زیادہ پکا ہوا پیلا یا سفید بھی چمکتی ہوئی صاف ستھری حالت میں ملے تو اسے خرید لیں خریدتے وقت اس کو ہلکا سا دبا کر دیکھیں اسے تھوڑا نرم تو ضرور ہونا چاہئے لیکن گلا سڑا یا کسی جانب سے پچکا ہوا پھل ہرگز نہ خریدیں سوائے چٹنی بنانے کے اس کے علاوہ بہت زیادہ گلے ہوئے پھل کی خریداری سے بھی اجتناب کریں
خشک آڑو:خشک آڑو اس قدر آسانی سے دستیاب نہیں ہوتے کہ جتنی آسانی سے خشک خوبانیاں ہوتی ہے لیکن اپنی کمیابی کے باوجود ان کی مقبولیت بہت زیادہ ہے اور لوگ ان کا استعمال شوق سے کرتے ہیں خشک آڑو چٹنی اور کیک وغیرہ میں استعمال ہونے کے علاوہ سادے بھی کھائے جاتے ہیں اس کو مربہ بنانے میں بھی باکثرت استعمال کیا جاتا ہے۔


سربند آڑو Frozen Peaches :کین میں دستیاب یا سر بند آڑوﺅں کو شوگر سیرپ یا سیپ کے رس میں محفوظ کیا جاتا ہے یہ پکانے کے دوران پکوان میں استعمال کئے جاتے ہیں جس سے ان میں منفرد ذائقہ اور مزہ پیدا ہوتا ہے آڑو ایک صحت بخش پھل ہے آج کل یہ بازار میں دستیاب ہے اس کو اپنی خوراک میں جگہ دیں اس کا استعمال آپ کی صحت و تندرستی میں یقینا اضافہ کرے گا۔

تاریخ اشاعت: 2018-03-20

Your Thoughts and Comments