اُردو پوائنٹ پاکستان کراچیکراچی کی خبریںکاپی رائٹ قوانین پر آن لائن ٹیکسی سروس کو کام سے روک دیا گیا اوبر انتظامیہ ..

کاپی رائٹ قوانین پر آن لائن ٹیکسی سروس کو کام سے روک دیا گیا

اوبر انتظامیہ نے سوفٹ ویئر چوری کرکے پہلے امریکا اور کینیڈا پھر پاکستان میں بھی سروس شروع کردی،شہری ظفیر قاسمی کا دعویٰ

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 اکتوبر2018ء)سندھ انٹیلیکچوئیل پراپرٹی ٹریبونل نے آئیڈیا چوری کرنے اور کاپی رائٹ قوانین پر آن لائن ٹیکسی سروس اوبر کو کام کرنے سے روک دیاہے۔

(خبر جاری ہے)

سندھ انٹیلیکچوئیل پراپرٹی ٹریبونل میں آن لائن ٹیکسی سروس اوبر کے خلاف شہری ظفیر قاسمی کی درخواست پر سماعت ہوئی جس میں ٹریبونل نے اوبر انتظامیہ کو آئندہ سماعت تک کام کرنے سے روک دیا۔

کاپی رائٹ سے متعلق دعوے میں کہا گیا ہے کہ آن لائن ٹیکسی سروس میرا آئیڈیا تھا اور ٹیکسی سروس کا انشورنس کمپنی سے شارٹ ٹرم معاہدہ بھی اس کونسیپٹ کا حصہ تھا۔درخواست گزار کے مطابق اوبر انتظامیہ نے سوفٹ ویئر چوری کرکے پہلے امریکا اور کینیڈا پھر پاکستان میں بھی سروس شروع کردی۔پاکستان میں آن لائن ٹیکسی سروس 2011 میں رجسٹرڈ ہوئی۔

اپنی رائے کا اظہار کریں -

کراچی شہر کی مزید خبریں