فواد عالم کو قومی ٹیم میں شامل نہ کرنے کا معاملہ پارلیمنٹ تک پہنچ گیا

چیف سلیکٹر انضمام الحق کے بھتیجے امام الحق اور ٹی ٹوئنٹی اور ون ڈے کے اوپنر فخر زمان کو کس کارکردگی کی بنیاد پر ٹیسٹ اسکواڈ میں شامل کیا گیا ‘سوال اٹھا دیا گیا

بدھ اپریل 18:11

فواد عالم کو قومی ٹیم میں شامل نہ کرنے کا معاملہ پارلیمنٹ تک پہنچ گیا
اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 اپریل2018ء) دورہ آئرلینڈ اور انگلینڈ کیلئے ٹیسٹ اسکواڈ کے انتخاب کا معاملہ پارلیمنٹ تک پہنچ گیا ہے اور چیف سلیکٹر کے بھتیجے کے انتخاب پر سوال کیا گیا ہے۔ قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے بین الصوبائی رابطہ کے اجلاس میں بھی ٹیم کی سلیکشن پر بات ہوئی۔ کمیٹی کے چیئرمین عبدالقہار خان نے کہاکہ چیف سلیکٹر انضمام الحق کے بھتیجے امام الحق اور ٹی ٹوئنٹی اور ون ڈے کے اوپنر فخر زمان کو کس کارکردگی کی بنیاد پر ٹیسٹ اسکواڈ میں شامل کیا گیا جبکہ فواد عالم اور وہاب ریاض کو نظر انداز کرنے کی کیا وجوہ ہیں جواب میں چیئرمین کرکٹ بورڈ نجم سیٹھی نے کہاکہ میں اس بارے میں کچھ نہیں جانتا اور نہ ہی کبھی سلیکشن کے معاملات میں کوئی مداخلت کی۔

انہوں نے کہا فواد عالم کو منتخب نہ کرنے اور نوجوان کھلاڑیوں کی شمولیت کے بارے میں چیف سلیکٹر ہی صورتحال پر روشنی ڈال سکتے ہیں۔

(جاری ہے)

اجلاس میں پاکستان سپر لیگ کے آڈٹ کا معاملہ بھی زیر بحث آیااورارکان نے اعتراض کرتے ہوئے کہاکہ جو دستاویزات مانگی گئیں وہ بورڈ نے فراہم نہیں کیں۔اس پرنجم سیٹھی نے پی سی بی کے مالیاتی امور کے شعبے کو تاخیر کا ذمہ دار قرار دیتے ہوئے کمیٹی کو یقین دہانی کرائی کہ پی ایس ایل کا آڈٹ جلد مکمل کرا لیا جائے گا۔