عمران خان نے ووٹ بیچنے کا الزام لگاکر سیاسی ساکھ کو نقصان پہنچایا،معراج ہمایون

سینیٹ الیکشن کے بعد ہی میں پی ٹی آئی میں شامل ہوئی ہوں، اگر کوئی پوچھ سکتا تھا تو وہ قومی وطن پارٹی تھی

جمعرات اپریل 23:04

پشاور۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 اپریل2018ء) تحریک انصاف کی رکن خیبر پختونخوا اسمبلی معراج ہمایون خان نے تحریک انصاف کے چیئر مین عمران خان کی جانب سے سینیٹ الیکشن میں ووٹوں کی فروخت کے الزام پر تشویش کا اظہار کیا ہے اور وضاحت دی ہے کہ سینیٹ الیکشن کے وقت وہ قومی وطن پارٹی کا حصہ تھی۔ پشاور پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے معراج ہمایون نے کہاکہ پی ٹی آئی نے کس بنیاد پر میرا نام اپنے پینل میں ڈالا،،عمران خان نے مجھ پر ووٹ بیچنے کا الزام لگاکر سیاسی ساکھ کو نقصان پہنچایا، سینیٹ الیکشن کے بعد ہی میں پی ٹی آئی میں شامل ہوئی ہوںاورالیکشن کے وقت میں قومی وطن پارٹی میں تھی،مجھ سے اگر کوئی پوچھ سکتا تھا تو وہ قومی وطن پارٹی تھی۔

انہوںنے کہاکہ قومی وطن پارٹی اور پی ٹی آئی کے اتحاد کی وجہ سے میں نے سینیٹ الیکشن میں پی ٹی آئی کے امیدواروں کو ووٹ دیا،ابھی تک پی ٹی آئی کی جانب سے مجھے شوکاز نوٹس نہیں ملا،،عمران خان کے الزام پر میری، میرے خاندان اور ورکرز کی دل آزاری ہوئی،،سینیٹ الیکشن کے وقت میں پی ٹی آئی کی پابند نہیں تھی۔

(جاری ہے)

ان کاکہنا تھا کہ میں نے پرویز خٹک کے پینل کو ووٹ دیا جس میں انیسہ زیب طاہرخیلی بھی شامل تھی،میرے نام کیساتھ قومی وطن پارٹی لکھا ہوا ہے تو پھر کیوں میری تذلیل کی گئی ،،وزیر اعلیٰ پرویز خٹک کو کیسے پتہ چلا کہ میں نے ووٹ کس کو دیا،شوکاز نوٹس کا انتظار کروں گی اور اپنا دفاع کروں گی اور پارٹی لیڈر شپ کو مطمئن کرنے کی کوشش کروں گی،،عمران خان کے فیصلے کا احترام کروں گی چاہے جو بھی فیصلہ ہو۔