مستقل مزاجی سے کوشش کامیابی کی منزل تک ضرور پہچاتی ہے، کامیابی کے ساتھ ناکامی کو بھی بھرپور انداز میں منانا چاہئے، ڈاکٹر فتح برفت

ناکامی اندر کی جستجو کو بڑھاتی ہے اور کامیابی کی نئی راہ ہموار کرتی ہے۔ محنت، سچائی، خود اعتمادی اور برداشت کامیاب زندگی کے بنیادی اصول ہیں

جمعرات اپریل 23:14

حیدرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 اپریل2018ء) وائس چانسلر جامعہ سندھ جامشورو پروفیسر ڈاکٹر فتح محمد برفت نے کہا ہے کہ مستقل مزاجی سے کوشش کامیابی کی منزل تک ضرور پہچاتی ہے، کامیابی کے ساتھ ناکامی کو بھی بھرپور انداز میں منانا چاہئے، کیونکہ ناکامی اندر کی جستجو کو بڑھاتی ہے اور کامیابی کی نئی راہ ہموار کرتی ہے۔ محنت، سچائی، خود اعتمادی اور برداشت کامیاب زندگی کے بنیادی اصول ہیں، جن کو اپنا کر آسانی سے منزل حاصل کی جا سکتی ہے۔

جامعہ سندھ بہت ساری زبانیں بولنے والوں کا گلدستہ ہے جس کی خوشبو پورے پاکستان اور پوری دنیا تک پھیلی ہوئی ہے۔ سندھی، اردو اور انگریزی زبانوں میں ہونے والے تقریری مقابلے طلباء و طالبات کی خود اعتمادی کو بڑھانے کے ساتھ مختلف زبانوں کو سیکھنے، سمجھنے اور ایک دوسرے کے قریب لانے میں مددگار ثابت ہونگے اور ان سے آپس میں باہمی اعتماد والا ماحول اور زیادہ مضبوط ہوگا۔

(جاری ہے)

ان خیالات کا اظہار انہوں نے جامعہ سندھ کے بیورو آف اسٹیگس کی جانب سی ہائیر ایجوکیشن کمیشن اسلام آباد کے تعاون سے ہونے والے انٹرڈپارٹمینٹل سندھی ، اردو اور انگریزی تقریری مقابلوں میں پہلی، دوسری اور تیسری پوزیشن حاصل کرنے والے طلبہ و طالبات میں انعامات تقسیم کرنے کی تقریب سے مہمان خصوصی کی حیثیت سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔وائس چانسلر ڈاکٹر فتح محمد برفت نے ملالہ یوسف زئی کا حوالہ دہتے ہوئے کہا کہ ایک بچہ، ایک استاد، ایک کتاب اور ایک پین دنیا کو تبدیل کر سکتے ہیں۔

ڈاکٹر برفت نے کہا کہ تینوں زبانوں میں تقریری مقابلوں میں جامعہ سندھ کے طلباء و طالبات نے جس خود اعتمادی سے حصہ لیا ہے اور جس انداز میں اپنی صلاحیتوں کا اظہار کیا ہے یہ ان کی قابلیت کی واضح مثال ہے۔ ان بچوں کو صرف مواقع مہیا کرنے کی ضرورت ہے۔ وائیس چانسلر ڈاکٹر برفت نے اپنے خطاب میںتینوں زبانوں میں پہلی، دوسری اور تیسری پوزیشن حاصل کرنے والوں کے ساتھ مقابلوں میں حصہ لینے والے تمام بچوں کو مبارکباد دی، اور ان کی کوششوں کی تعریف کی، اس موقع پر ڈاکٹر برفت نے بیورو آف اسٹیگس کی ڈائریکٹر ڈاکٹر سمیرا عمرانی کی کاوشوں کو خصوصی طور پر سراہتے ہوئے تین دن تک کامیابی سے تقریری مقابلوں کا انعقاد کرنے پر مبارکباد دی، انہوں نے تقریب میں شریک ہائیر ایجوکیشن کمیشن اسلام آباد کے سندھ میں مقرر ریجنل ڈائریکٹر جاوید علی میمن کے تعاون کا بھی شکریہ ادا کیا۔

ایچ ای سی اسلام آباد کے سندھ میں مقرر ریجنل ڈائریکٹر جاوید علی میمن نے کہا کہ اس قسم کے پروگراموں کا مقصد ہم نصابی سرگرمیوں کو بڑھانا اور نوجوانوں کی صلاحیات کو اجاگر کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کے ہم کو زبان، رنگ و نسل کے فرق کو بھول کر ایک پاکستانی کی حیثیت میں اپنی پہچان قائم کرکے ملک کی تعمیر و ترقی میں اپنا کردار ادا کرنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ 20ویں علامہ اقبال شیلڈ ایوارڈ کے سلسلے کا یہ پہلا مرحلہ تھا، اس کا دوسرا مرحلہ صوبائی صطح پر کراچی میں جبکہ تیسرا مرحلہ وفاقی سطح پر اسلام آباد میں ہوگا۔

ایچ ای سی اس قسم کی سرگرمیوں کو بڑھانے کے سلسلے میں مستقبل میں بھی اپنا تعاون جاری رکھے گی۔تقریب کے شروع میں جامعہ سندھ کے بیورو آف اسٹیگس کی ڈائریکٹر ڈاکٹر سمیرا عمرانی نے تمام مہمانان کو خوش آمدید کرتے ہوئے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر فتح محمد برفت کی جانب سے اس قسم کے پروگرام کے مواقعے فراہم کرنے اورحوصلا افزائی کرنے پران کا خصوصی شکریہ ادا کیا۔

اس کے ساتھ انہوں نے ایچ ای سی اسلام آباد کی ریجنل ڈائریکٹر جاوید علی میمن کا بھی شکریہ ادا کیا۔ ڈاکٹر عمرانی نے اپنے خطاب میں تین دن والے تقریری مقابلوں کی تفصیلات بھی بتائیں۔انٹر ڈپارٹمینٹل سندھی، اردو اور انگریزی تقریری مقابلے 2018ء کے سلسلے میں تیسرے دن انگریزی زبان میںتقریری مقابلے ہوئے۔ مقابلے کے لئے مقرر ججز پروفیسر محمد ظفر لغاری، پارس کٹپر اور محمد فائز عالم کی جانب سے جاری کردہ نتائج کے مطابق آئی بی ای کے طالب علم طارق حفیظ بگھیو نے پہلی، انگریزی شعبہ کے ثقلین شاہ نے دوسری، جبکہ زولاجی شعبہ کی ثنا سحر نے تیسری پوزیشن حاصل کی۔

جبکہ زیادہ سے زیادہ پوزیشنیں حاصل کرکے چیمپیئن ٹرافی انسٹیٹیوٹ آف انگلش لینگویج اینڈ لٹریچر نے حاصل کی جو انسٹیٹیوٹ کے ڈائریکٹرڈاکٹر رفیق احمد میمن نے طلباء و طالبات کے ساتھ وائس چانسلر ڈاکٹر برفت سے حاصل کی، اس موقع پر وائس چانسلر نے انگریزی زبان کے تقریری مقابلے میں پوزیشن حاصل کرنے والے اوپر ذکر کئے گئے طالب علموں کے ساتھ سندھی زبان میں پہلی، دوسری اور تیسری پوزیشن حاصل کرنے والے طلباء و طالبات نسیم چانڈیو، شازیہ اجن، نوشین اور اردو زبان میں پہلی، دوسری اور تیسری پوزیشن حاصل کرنے والے ماہ رخ بلوچ، سعد غفار اور محمد بلال کو شیلڈز، کیش انعامات اور تعریفی سرٹیفکیٹ دیئے، تقریب میں جامعہ سندھ ٹھٹھہ کیمپس کے فوکل پرسن پروفیسر ڈاکٹر سرفراز حسین سولنگی، انگریزی شعبہ کے استاد ڈاکٹر غلام علی برڑو سمیت مختلف شعبوں کے اساتذہ، طلباء و طالبات شریک ہوئے۔