سیکرٹری محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئرعمران سکندر بلوچ کا پنجاب بھر میں ڈینگی سے بچاؤ کی سرگرمیاں تیز کرنے کاحکم

عوام صفائی کا خیال رکھ کر ڈینگی مچھر کی افزائش کو روکنے میں اہم کردارکریں‘سیکرٹری محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئرپنجاب

سیکرٹری محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئرعمران سکندر بلوچ کا پنجاب بھر میں ڈینگی سے بچاؤ کی سرگرمیاں تیز کرنے کاحکم
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 20 اکتوبر2021ء)صوبائی سیکرٹری محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئرعمران سکندر بلوچ نے پنجاب بھر میں ڈینگی سے بچاؤ کی سرگرمیاں تیز کرنے کاحکم دے دیا ہے۔ محکمہ صحت نے صوبہ بھر میں ڈینگی لاروا کو تلف کرنے اور افزائش روکنے کیلئے کارروائیاں تیزکردی ہیں۔ عمران سکندربلوچ نے کہاکہ گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران صوبہ بھر سے ڈینگی کے 412 مریض رپورٹ ہوئے ہیں۔

گذشتہ روز لاہور سے ڈینگی کے 332 مریض رپورٹ ہوئے ہیں۔ راولپنڈی سے ڈینگی کی51 جبکہ بہاولپور سے 7 مریض رپورٹ ہوئے ہیں۔انہوں نے کہاکہ گذشتہ روز اٹک اور فیصل آباد سے 4 چار مریض رپورٹ ہوئے ہیں۔ بہاولنگر، لودھراں اور میانوالی سے ڈینگی کے 2 دو مریض رپورٹ ہوئے ہیں۔گذشتہ روز چکوال، حافظ آباد، جہلم اور قصور سے ڈینگی کا 1 ایک کیس سامنے آیا ہے۔

(جاری ہے)

عمران سکندر بلوچ نے کہاکہ رواں سال پنجاب بھر سے اب تک ڈینگی کے کیسز کی تعداد 7,910 ہو چکی ہے۔ رواں سال لاہور سے اب تک ڈینگی کے 5,?667 کیسز سامنے آئے ہیں۔ رواں سال پنجاب بھر میں ڈینگی بخار کے باعث 21 افراد جان کی بازی ہار چکے ہیں۔گذشتہ روز پنجاب میں ڈینگی بخار کے باعث کوئی ہلاکت رپورٹ نہیں ہوئی ہے۔ صوبہ بھر کے ہسپتالوں میں ڈینگی کے 1,638 مریض داخل ہیں۔

لاہور کے ہسپتالوں میں ڈینگی کے 954 مریض داخل ہیں۔ لاہور کے علاوہ صوبہ بھر کے ہسپتالوں میں ڈینگی کے 684 مریض داخل ہیں۔ صوبائی سیکرٹری صحت عمران سکندر بلوچ نے کہاکہ پنجاب بھر کے سرکاری ہسپتالوں میں اس وقت ڈینگی کے لئے 4,174 بستر مختص کئے گئے ہیں۔ ڈینگی کے بڑھتے ہوئے کیسز کو مد نظر رکھتے ہوئے لاہورکے ٹیچنگ ہسپتالوں میں بھی ڈینگی کے مریضوں کیلئے بستروں کی تعدادمیں اضافہ کیا گیاہے۔

پنجاب میں ڈینگی کیلئے مختص کئے گئے 1638 بستروں پر مریض زیر علاج ہیں۔ لاہور میں ڈینگی کیلئے مختص کئے گئے 954 بستروں پر مریض زیر علاج ہیں۔ صوبائی سیکرٹری محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئرنے مزیدکہاکہ عوام مون سون میں ڈینگی سے بچاؤ کی احتیاطی تدابیر ضروراپنائیں - مون سون کے دوران ڈینگی سے بچاؤ کے لئے شہری زیادہ ذمہ داری کا مظاہرہ کریں۔

خصوصاً بارش کا پانی رہائشی علاقوں میں نہ جمع ہونے دیں۔ انہوںنے کہاکہ گذشتہ روز محکمہ صحت کی ٹیموں نے پنجاب بھر میں 299,403 ان ڈور مقامات کو چیک کیاگیا۔ پنجاب بھر میں محکمہ صحت کی ٹیموں نے 74,573 آؤٹ ڈور مقامات کوچیک کیاگیا۔گذشتہ روز پنجاب بھر میں 2,139 ان ڈور اور آؤٹ ڈور مقامات سے لاروا تلف کیا گیا۔ محکمہ صحت کی ٹیموں نے لاہور میں 65,069 ان ڈور مقامات کو چیک کیاگیا۔

گذشتہ روز محکمہ صحت کی ٹیموں نے لاہور میں 9,093 آؤٹ ڈور مقامات کوچیک کیاگیا۔ لاہور میں 1,396 آؤٹ ڈور اور آوٹ ڈور مقامات سے لاروا تلف کیا گیا۔صوبائی سیکرٹری صحت نے عوام سے اپیل کی کہ کورونا کے ساتھ ساتھ ڈینگی سے بچاؤ کی احتیاطی تدابیر بھی اپنائیں۔ انہوں نے پنجاب کے تمام علماء کرام سے بھی اپیل کی کہ وہ مساجد میں آنے والے نمازیوں کو ڈینگی سے بچاؤ کے حوالے سے آگاہ کریں۔ ذمہ دار شہری ہونے کا ثبوت دیں اور اپنے اردگرد کے ماحول کو صاف ستھرا رکھیں۔ گھر کے اندر اور باہر پانی کھڑا نہ ہونے دیں۔ عوام صفائی کا خیال رکھ کر ڈینگی مچھر کی افزائش کو روکنے میں اہم کردارکریں۔

Your Thoughts and Comments