بند کریں
صحت صحت کی خبریںملک کی سلامتی پرخطرات منڈلارہے ہیں ، غریب ومتوسط طبقہ کی قیادت ہی ملک کوبچاسکتی ہے،الطاف ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 22/05/2008 - 18:52:30 وقت اشاعت: 21/05/2008 - 12:20:48 وقت اشاعت: 20/05/2008 - 15:58:42 وقت اشاعت: 20/05/2008 - 15:30:01 وقت اشاعت: 20/05/2008 - 11:30:15 وقت اشاعت: 19/05/2008 - 21:18:11 وقت اشاعت: 18/05/2008 - 12:29:08 وقت اشاعت: 17/05/2008 - 13:25:05 وقت اشاعت: 15/05/2008 - 22:37:41 وقت اشاعت: 15/05/2008 - 11:57:48 وقت اشاعت: 15/05/2008 - 11:56:57

ملک کی سلامتی پرخطرات منڈلارہے ہیں ، غریب ومتوسط طبقہ کی قیادت ہی ملک کوبچاسکتی ہے،الطاف حسین،مجھے صدریاوزیراعظم بننے کاکوئی شوق نہیں ہے، پنجاب کی سیاسی شخصیات اوردانشوروں کے وفدسے بات چیت

لندن(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔19مئی۔2008ء)متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین نے کہاہے کہ ملک کی سلامتی پرخطرات منڈلارہے ہیں ،ایسے میں غریب ومتوسط طبقہ کی قیادت ہی ملک کوبچاسکتی ہے ۔انہوں نے کہاکہ مجھے اپنے لئے اقتدارکی نہیں بلکہ ملک کو بچانے کی فکرہے۔انہوں نے ان خیالات کااظہارپنجاب سے تعلق رکھنے والی سیاسی شخصیات اور دانشوروں کے ایک وفدسے بات چیت کرتے ہوئے کیاجس نے گزشتہ روزایم کیوایم انٹرنیشنل سیکریٹریٹ لندن میں الطاف حسین سے ملاقات کی ۔

وفد میں ممتازدانشوراورکالم نگار حسن نثار، لاہورسے سابق رکن پنجاب اسمبلی عبدالرشید بھٹی، اقبال ٹاوٴن لاہورکے سابق ٹاوٴن ناظم راناجاویدعمراورگوجرانوالہ سے امیدواربرائے قومی اسمبلی اورممتازصنعتکار خواجہ محمدصالح شامل تھے ۔ ملاقات میں ملک کے سیاسی ومعاشی حالات،ملک میں جمہوریت کے مستقبل اور عوام کودرپیش مشکلات ومسائل سمیت مختلف امورپر تفصیلی تبادلہ خیال کیاگیا۔

اس موقع پر اظہارخیال کرتے ہوئے الطاف حسین نے کہاکہ بدقسمتی سے ہردورمیں ملک پر 2فیصدجاگیرداروں اوروڈیروں کی حکمرانی رہی ہے او رغریب عوام کومختلف نعرے دیکرانہیں سیاسی مفادات اور اقتدارکے حصول کیلئے استعمال کیا گیا جبکہ عوام اپنے بنیادی حقوق سے محروم رہے ۔انہوں نے کہاکہ غریبوں کی حالت وہی بدل سکتے ہیں جنہوں نے خودغربت اور بھوک پیاس دیکھی ہوجبکہ وہ جاگیرداریاوڈیرے جنہوں نے غربت دیکھی نہ ہووہ غریبوں کے مسائل اوران کی تکالیف کونہیں سمجھ سکتے ۔

جناب الطاف حسین نے کہاکہ میں نے آج تک الیکشن میں حصہ نہیں لیا کیونکہ میری جدوجہداپنی ذات کیلئے نہیں ہے، مجھے ملک کا صدر یا وزیراعظم بننے کاکوئی شوق نہیں ہے بلکہ میرامقصدملک کا سسٹم بدلناہے۔ انہوں نے کہاکہ ہم امیروں سے انکی دولت چھیننانہیں چاہتے ہیں بلکہ ہم ملک میں ایسا نظام قائم کرنا چاہتے ہیں جس میں غریبوں سے ان کاحق نہ چھینا جائے ۔

ہم جاگیرداروں کے خلاف نہیں بلکہ ہم فرسودہ جاگیردارانہ نظام کے خلاف ہیں ،ہم چاہتے ہیں کہ کھیتوں میں کام کرنے والے کسانوں اورہاریوں کوبھی زرعی مزدوروں کی حیثیت سے تمام جائز حقوق حاصل ہوں۔ انہوں نے کہاکہ ملک پر ایم کیو ایم کی حکومت آئی تو کسانوں اورہاریوں کوانکے تمام جائز حقوق دیئے جائیں گے ، زمین کی حدملکیت مقررکی جائے گی اورباقی زمین ہاریوں اورکسانوں میں تقسیم کی جائے گی۔

الطاف حسین نے پنجاب سمیت ملک بھر کے غریب ومتوسط طبقہ کے عوام خصوصاً نوجوانوں سے اپیل کی کہ وہ ملک کی سنگین صورتحال کوپیش نظررکھتے ہوئے آگے آئیں اورملک سے جاگیردارانہ نظام کے خاتمہ کیلئے عملی جدوجہدکریں ۔ انہوں نے شاعروں، دانشوروں، قلم کاروں اورسیاسی کارکنوں سے بھی کہا کہ وہ ان حالات میں آگے آکر اپنا کردارادا کریں ۔ الطاف حسین نے ممتاز دانشور اور کالم نگارجناب حسن نثار کوان کے کالموں ، تبصروں اورتجزیوں میں ملک اور عوام کے حقیقی مسائل کو اجاگر کرنے پرزبردست خراج تحسین پیش کیااورکہاکہ دیگرقلم کاروں کوبھی چاہیے کہ وہ اسی حق پرستانہ کردارکا عملی مظاہرہ کریں تاکہ ملک کے عوام میں شعور بیدارہو۔

اس موقع پر جناب حسن نثاراوروفدمیں شامل دیگرسیاسی شخصیات نے ملک میں غریب ومتوسط طبقہ کی قیادت کواسمبلیوں میں پہنچانے اورحقیقی عوامی جمہوریت کے قیام کیلئے جناب الطاف حسین کی سیاسی جدوجہد، آئیڈیالوجی اورکردارکو سراہا اور مڈل کلاس قیادت کے نظریہ کو ملک کی بقاء وسلامتی اور عوام کی حالت بدلنے کیلئے وقت کی اہم ضرورت قراردیا۔ملاقات میں ایم کیوایم کی رابطہ کمیٹی کے سینئرڈپٹی کنوینرطارق جاوید، رابطہ کمیٹی کے ارکان سلیم شہزاد، مصطفےٰ عزیزآبادی اورآصف صدیقی بھی موجود تھے ۔
19/05/2008 - 21:18:11 :وقت اشاعت