بند کریں
صحت صحت کی خبریںجنرل مشرف جیسے حکمرانوں نے امریکہ کو اقتدار ‘عزت و ذلت کا مالک تصور کر لیا ہے ۔ قاضی حسین ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 14/01/2007 - 19:07:14 وقت اشاعت: 14/01/2007 - 12:11:18 وقت اشاعت: 13/01/2007 - 21:54:41 وقت اشاعت: 13/01/2007 - 15:26:08 وقت اشاعت: 12/01/2007 - 21:39:07 وقت اشاعت: 12/01/2007 - 18:14:02 وقت اشاعت: 12/01/2007 - 17:54:32 وقت اشاعت: 12/01/2007 - 16:55:19 وقت اشاعت: 12/01/2007 - 16:48:40 وقت اشاعت: 11/01/2007 - 20:26:15 وقت اشاعت: 11/01/2007 - 19:45:32

جنرل مشرف جیسے حکمرانوں نے امریکہ کو اقتدار ‘عزت و ذلت کا مالک تصور کر لیا ہے ۔ قاضی حسین احمد ۔۔اسرائیل اور بھارت سے تعلقات استوار کرنے کی کوششیں کی جا رہی ہیں انہی مفاد پرست حکمرانوں کی وجہ سے سیاست بدنام ہے ۔پانچ روزہ تربیت گاہ اور جمعہ کے خطبہ سے خطاب

لاہور (اردوپوائنٹ اخبار تازہ ترین12جنوری2007 ) متحدہ مجلس عمل کے صدر اور جماعت اسلامی پاکستان قاضی حسین احمد نے کہا ہے کہ امریکہ مسلمانوں کو باہمی طور پر لڑانے کیلئے جنرل مشرف جیسے آلہ کار حکمرانوں کو استعمال کر رہا ہے ۔ اس سازش کو کامیاب بنانے کیلئے سیکولر طرز پر نصاب تعلیم استوار کیا جا رہا ہے کیونکہ مسلمانوں کو لادینیت کی طرف دھکیل کر ہی امت کے تصورکو خاک میں ملایا جا سکتا ہے ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعہ کے روز مرکزجماعت منصورہ میں کارکنان کی پانچ روزہ تربیت گاہ کے موقع پر خطاب اور حاضرین کے سوالوں کے جواب دیتے ہوئے کیا ۔ قاضی حسین احمد نے کہا کہ آج کے دور میں امریکہ اپنی مادی ترقی کے زور پر ایک ایسے طاغوت کا روپ دھا ر چکا ہے کہ جو صرف اور صرف دنیا میں اپنے رواج کو فروغ دینا چاہتا ہے ۔ جنر ل مشرف جیسے حکمرانوں نے امریکہ کو اقتدار اور عزت و ذلت کا مالک تصور کر لیا ہے اسی لئے وہ امریکی طاغوت کے سامنے سرتسلیم خم کرنے میں عاقبت خیال کرتے ہیں اور اسی کا درس دیتے ہوئے اسرائیل اور بھارت سے تعلقات استوار کرنے کی کوشش کر رہے ہیں ۔

اسلام کی تعلیمات کے خلاف امریکی روشن خیالی اور اعتدال پسندی کا یجنڈا فروغ دیکر حکمران در اصل خود کو دھوکہ دے رہے ہیں ۔ آج انہی مفاد پر ست حکمرانوں کی وجہ سے سیاست بدنام ہے اور عوام اسے چال بازوں کی طرف سے لوگوں کو بے وقوف بنانے کا ذریعہ خیال کرتے ہیں ۔ قاضی حسین احمد نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ گزشتہ انتخابات میں دینی قوتوں کی کامیابی کی وجہ متحدہ مجلس عمل پاکستان ہے اور اسے ہر صورت میں برقرار رکھا جائے گا۔

دریں اثناء جامع مسجد منصورہ میں خطبہ جمعہ دیتے ہوئے قاضی حسین احمد نے کہا کہ سابق امریکی سیکرٹری خارجہ البرائٹ نے اپنی تازہ کتاب میں امریکہ کی ”لڑاؤ اور حکومت کرو“پالیسی کا احاطہ کرتے ہوئے کہا کہ عراق کے تیل پر امریکہ بطور سپر پاور حق فائق رکھتا ہے مگر اس کے حصول کیلئے امریکی خون بہانا کسی طرح جائز نہیں یہ مقصد عراق کو کرد ‘شیعہ اور سنی علاقوں میں تقسیم کر کے حاصل کیا جا سکتا ہے ۔

قاضی حسین احمد نے کہا کہ آج عراق میں امریکہ کی اسی پالیسی پر عمل کے نتیجے میں 6لاکھ سے زائد عراقی ہلاک ہو چکے ہیں اور اب بھی مسلکی بنیادوں پر فسادات نے بغداد سمیت دیگر علاقوں کا امن تباہ کر رکھا ہے ۔ قاضی حسین احمد نے کہا کہ پاک افغان بارڈر پر بارودی سرنگیں اور باڑ لگانے کا مقصد یہ ہے کہ علاقے میں موجود عقیدے کی بنیادوں پر رشتوں میں بندھے لوگ تقسیم ہو جائیں ۔

اس کے علی الرغم پاک بھارت سرحدوں کو سافٹ بارڈر بنانے کیلئے کوششیں جاری ہیں ۔ پنجاب حکومت کے زیر اہتمام ہندوؤں کا میلہ منعقد کرایا جا رہا ہے تا کہ ہندوانہ تہذیب یہاں رائج کی جا سکے ۔ انہوں نے کہا کہ جنرل مشرف حکومت کا سب سے پہلے پاکستان کا نعرہ دراصل اسے امت مسلمہ سے کاٹنے کی ایک کوشش ہے ۔ حکمرانوں کی ان دین اور ملک دشمن پالیسیوں سے نجات کیلئے ضروری ہے کہ عوام اپنی صفوں میں اتحاد کو فروغ دیں اور ایسے حکمرانوں کو ایوان اقتدار سے نکال باہر کرنے کیلئے کمر بستہ ہو جائیں ۔
12/01/2007 - 18:14:02 :وقت اشاعت