بلوچستان حکومت کاصوبے میں جدید پلازمہ سپریشن کارڈ کے ذریعے ہیپاٹائٹس سی کے ٹیسٹ کرنے کا فیصلہ

کوئٹہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 25 ستمبر2021ء)بلوچستان حکومت کاصوبے میں جدید پلازمہ سپریشن کارڈ کے ذریعے ہیپاٹائٹس سی کے ٹیسٹ کرنے کا فیصلہ ،پہلے مرحلے میں صوبے کی جیلوں میں پلازمہ سپریشن کارڈ کے ذریعے نومبر میں ٹیسٹ کا آغاز کیا جائے گا، پی ایس سی ٹیسٹنگ کیلئے عملے کی تربیت شروع کردی گئی ہے ۔وزیراعلیٰ ہیپاٹائٹس فری پروگرام بلوچستان کی کوارڈی نیٹر ڈاکٹر گل سبین اعظم غوریزئی کے مطابق پارلیمانی سیکرٹری صحت ڈاکٹر ربابہ بلیدی اور سیکرٹری صحت عزیز احمدجمالی کی خصوصی کوششوں سے پاکستان میں پہلی بار پلازمہ سپریشن کارڈ کے ذریعے ہیپاٹائٹس سی کے ٹیسٹ کرنے کا منصوبہ بلوچستان سے شروع کیا جارہا ہے ۔

انہوںنے کہا کہ پلازمہ سپریشن کارڈ کے ذریعے کئے جانے والے ٹیسٹ کیلئے درجہ حرارت اور وقت کی کوئی قید نہیں ہوتی ساتھ ہی پہلے جن ٹیوبز میں خون کے نمونے اکٹھے کئے جاتے تھے وہ اکثر ٹوٹ جاتی تھیں جس سے بعض اوقات غلط نتائج بھی آتے تھے ۔

(جاری ہے)

انہوں نے بتایا کہ پلازمہ سپریشن کارڈ کے ذریعے پی سی آر ٹیسٹنگ کے لئے نمونے لئے جاسکتے ہیں ساتھ ہی اس کے استعمال سے زائد بجٹ اور غلط نتائج کے آنے کے امکانات بھی ختم ہوجائیں گے ۔

انہوںنے بتایا کہ صوبے میں پہلے مرحلے میں پی ایس سی کے ذریعے نومبر میں 3ماہ تک جیلوں میں ٹیسٹنگ کا آغاز کیا جائے گا جن کے نتائج کا مشاہدہ کرنے کے بعدصوبے کے دیگر علاقوں میں اس منصوبے کو وسعت دی جائے گی۔انہوں نے کہا کہ پی ایس سی ٹیسٹنگ کیلئے عملے کی تربیت شروع کردی گئی ہے اس سلسلے میںپہلی ٹریننگ قومی ادارہ برائے ہیپاٹائٹس کی ڈاکٹر ہماقریشی کراچی سے آکر کوئٹہ میں عملے کو پہلے مرحلے میں تربیت دی ہے ۔

Your Thoughts and Comments