پس پردہ قوتیں اپنے مستقبل کیلئے حکومت کی حمایت سے ہٹ جائیں ، مولانا فضل الرحمان

حکمرانوں کو لانے والے معافی مانگیں اوراداروں کومتنازعہ نہ بنایاجائے ،حکمران دسمبر نہیں دیکھ پائیں گے ، جمعیت علما اسلام ف کے سربراہ کا عوامی اجتماع سے خطاب

Sajid Ali ساجد علی بدھ اکتوبر 16:01

پس پردہ قوتیں اپنے مستقبل کیلئے حکومت کی حمایت سے ہٹ جائیں ، مولانا ..
چارسدہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین ۔ 14 اکتوبر2020ء) جمعیت علمائے اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ ہماراحکمران عالمی اسٹیبلشمنٹ کا نمائندہ اور دھاندلی کی پیداوار ہے ، پس پشت قوتیں اپنے مستقبل کے لیے ان کی پشت سے ہٹ جائیں، حکمرانوں کو لانے والے معافی مانگیں اوراداروں کومتنازعہ نہ بنایاجائے ،حکمران دسمبر نہیں دیکھ پائیں گے ۔

تفصیلات کے مطابق صوبہ خیبرپختونخوا کے شہر چارسدہ میں عوامی اجتماع سے خطاب میں انہوں نے کہا کہ ہماری طرف سے حکومت کے خلاف اعلان بغاوت ہے، ہم اسے سمندربرد کریں گے، کیوں کہ وجودہ حکمرانوں نے ملک کوتباہی کے دھانے پرلاکھڑاکیا ہے،جہاں غریب کاجینا دو بھر ہوچکا ہے ،اور لوگ اپنے بچے فروخت کرنے پرمجبورہوگئے ہیں، جب کہ دوسری جانب ہم خطے میں تنہائی کاشکار ہیں، ان حکمرانوں کی کرسی کی کوئی اہمیت نہیں، ان کی حکمرانی کو مسترد کرتے ہیں، ہمارے بزرگوں نے اس ملک کی آزادی کے لیے قربانیاں دیں اورانگریز کے خلاف جدوجہد کی، ہم اسے راستے کے راہی ہیں اور وہی تحریک چلاتے ہوئے عالمی اسٹیبلشمنٹ سے پاکستان کونجات دلائیں گے ، ہم ترنوالہ نہیں لوہے کے چنے ہیں، حکومت مخالف تحریک کااعلان ہوچکا ہے،اس سلسلے میں پورے ملک میں جلسے ہوں گے،اور یہ احتجاج حکومت کے خاتمے پررکے گا، حکمران دسمبر نہیں دیکھ پائیں گے ۔

(جاری ہے)

جمعیت علما اسلام ف کے سربراہ نے کہا کہ یہ 22 کروڑعوام کا ملک ہے جسے عالمی اسٹیبلشمنٹ کے لیے استعمال نہیں ہونے دیں گے، ہماراحکمران اسی اسٹیبلشمنٹ کا نمائندہ اوردھاندلی کی پیداوار ہے اس کے خلاف ہماراعلان بغاوت ہے، ہم اسے سمندربردکریں گے ، جب کہ پس پشت قوتیں بھی اپنے مستقبل کے لیے ان کی پشت سے ہٹ جائیں، حکمرانوں کو لانے والے معافی مانگیں اوراداروں کومتنازعہ نہ بنایاجائے۔

چار سدہ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments