مظفر گڑھ میں گرینڈ سرچ آپریشن جاری، 6مجرمان اشتہاری سمیت 24 مشکوک افراد زیر حراست، بھاری مقدار میں منشیات اور ناجائز اسلحہ برآمد

بدھ جون 23:51

لاہور۔19 جون(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 19 جون2019ء) انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب کیپٹن ریٹائرڈ عارف نواز خان کی ہدایات پر ضلع مظفر گڑھ میں جرائم پیشہ افراد کی ممکنہ کمین گاہوں کا گھیراؤ اور گرینڈ سرچ آپریشن شروع کردیا گیا ہے ۔

(جاری ہے)

تفصیلات کے مطابق، ڈی پی او صادق علی ڈوگر کی زیر نگرانی مظفر گڑھ میں علی پور کچہ کے علاقے اور علی پور تحصیل سمیت دیگر علاقوں میں گرینڈ سرچ آپریشنز کا آغازکیا گیاہے ،اس سلسلے میں ڈی ایس پی جتوئی آصف رشید اور ڈی ایس پی صدر سرکل ناصر نواز کی سربراہی میں پولیس کی بھاری نفری ایلیٹ فورس،کوئیک ریسپانس فورس،ڈولفن سکواڈ اور دیگر قانون نافذ کرنے والے اداروں کے ساتھ مل کر علی پور کے دور دراز علاقوں، کچہ دریائے سندھ، سیت پور، پتن مقامات، خیر پور سادات، کندائی کے علاقوں میںگرینڈ سرچ آپریشن کیا جارہا ہے اور اس میں سرکل علی پور و جتوئی پولیس، ایلیٹ فورس، کوئیک ریسپانس فورس ریزرو پولیس کے (1000) ایک ہزار سے زائد جوان و افسران حصہ لے رہے ہیں، سرچ آپریشن میں بائیو میٹرک ڈیوائسز، سواس سسٹم، ہوٹل آئی، ٹرائیولر آئی، انٹی وہیکل لفٹنگ سسٹم سے چیکنگ کی جا رہی ہے اور آپریشن میں مشکوک افراد، کچی آبادیوں، ہوٹلز، سرائے بطور خاص چیک کیا جا رہا ہے جس میں پولیس کو جرائم پیشہ عناصر کے خلاف بڑی کامیابی ملی ہے اور مختلف جگہوں سے 6 مجرمان اشتہاری، 24 مشکوک افراد زیر حراست لئے گئے، سرچ آپریشن میں کارروائی کرتے ہوئے پولیس نے 17 تعدادی ناجائز اسلحہ جس میں کلاشنکوف، کاربین، پستول اور میگزین شامل ہیں برآمدکیے گئے، اسی طرح سرچ آپریشن میں 5 کلو گرام منشیات بھنگ اور 50 لیٹر شراب برآمد کرتے ہوئے ملزمان کے خلاف مختلف تھانوں میں مقدمات درج کر لئے، سرچ آپریشن کے دوران بائیو میٹرک ڈیوائسز اور قومی شناختی کارڈ سے 650 افراد کی تصدیق عمل میں لائی گئی اور 230 سے زائد گھروں، اور دیگر رہائش گاہوں کی سرچنگ بھی کی گئی،ڈی پی او مظفر گڑھ کے مطابق سرچ آپریشن میں جرائم پیشہ افراد کی ممکنہ کمین گاہوں کا گھیراؤ کیا جا رہا ہے اوراس سرچ آپریشن کا دائرہ کار ضلع بھر کیلئے بڑھایا دیا جائے گا۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments